حیدرآباد میں عرب شہریوں سے شادی کرانے والا گروہ بے نقاب،8شیوخ سمیت17گرفتار

حیدرآباد: (یواین آئی ) حیدرآباد پولیس نے شادیوں کے ایک گروہ کو بے نقاب کرتے ہوئے 17افراد بشمول 8 عرب شہریوں جن کا تعلق سعودی عرب ‘ عمان اور قطر سے ہے ‘ کے علاوہ دیگر 4 افراد کو شادی کے نام پر معصوم لڑکیوں کو دھوکہ دینے کے الزام میں گرفتار کرلیا۔ بتایا جاتا ہے کہ عرب ممالک سے یہ شیوخ نابالغ لڑکیوں سے کنٹریکٹ میریج کے لئے حیدرآباد پہنچے تھے۔ پولیس نے بتایا کہ 4لاج کے مالکین اور 5بروکرس کو بھی حیدرآباد کے پرانے شہر سے گرفتا رکیا گیا۔
عرب شیوخ نے کنٹریکٹ کی بنیاد پر فلک نما اور چندرائن گٹہ کے علاقہ میں دو نابالغ لڑکیوں سے شادی کی تھی۔ قبل ازیں ممبئی کے صدر قاضی فرید احمد خان کو پولیس نے پیر کو حراست میں لیا تھا۔ پوچھ تاچھ کے دوران پتہ چلا کہ وہ نابالغ لڑکی کے میریج سرٹیفیکیٹ کی فراہمی میں ملوث ہے۔ اس نابالغ لڑکی سے عمان کے شہری نے شادی کی تھی اور اسے اپنے ساتھ لے کر گیا تھا۔ اس قاضی کی جانب سے جاری کردہ میریج سرٹیفیکیٹ کی بنیاد پر اس لڑکی کا ویزا حاصل کرنے میں مدد ملی تھی۔ پولیس نے حیدرآباد میں اس طرح کی کنٹریکٹ شادیوں کے کئی واقعات کا حالیہ چند دنوں میں پتہ لگایا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Hyderabad police bust marriage racket arrest 17 including 8 sheikhs in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply