آدرش گھپلہ کیس میں سابق کانگریسی وزیر اعلیٰ اشوک چوان کو ممبئی عدالت سے زبردست راحت

نئی دہلی: سال رفتہجاتے جاتے کانگریس کو پارٹی اور انفرادی سطح پر کسی نہ کسی شکل میں سیاسی و سماجی تقویت پہنچارہا ہے۔ جہاں ایک جانب اسے گجرات اسمبلی انتخابات میں سیٹوں کا زبردست فائدہ ہوا وہیں دوسری جانب ٹو جی اسپیکٹرم میں منموہن سنگھ کی حکومت کے ایک وزیر اور حلیف پارٹی کی ممبر پارلیمنٹ کنی موجھی سمیت17ملززموں کو دہلی کی ایک عدالت نے بری کردیا اور ایک روز بعد ہی جمعہ کوممبئی کی ایک عدالت نے آدرش گھپلہ میں مہاراشٹر کے سابق کانگریسی وزیر اعلیٰ اشوک چوان پر مقدمہ چلانے کے لیے ریاستی گورنر کی منظوری کو مسترد کر کے اسے کرپشن کے حوالے سے بے قصور ثابت کرنے کی راہ پر ڈال کر زبردست تقویت پہنچائی۔ کیونکہ،یہ فیصلہ چوان کو اس آدرش گھپلہ میں بے قصور ثابت کر سکتا ہے جس میں انہیں وزارت اعلیٰ کے عہدے سے مستعفی ہونا پڑا تھا۔ اس عدالتی فیصلہ کے بعد چوان نے بی جے پی کو آڑے ہاتھوں لیا۔انہوں نے کہا کہ ان معاملات پر بی جے پی نے2014کے انتخابات میں کانگریس کو بدنام کر کے ایسا زبردست فائدہ اٹھایا تھاکہ مرکز می ہی نہیں بلکہ کشمیر سے کنیا کماری کے درمیان کے 19صوبوں میں اس کی حکومت قائم ہو گئی۔

Title: huge relief for ashok chavan in adarsh scam case | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply