پردے کے احکامات کو فراموش کر نے سے ہی سماجی و معاشرتی برائیاں پھیل رہی ہیں

حیدرآباد: حجاب مسلم عورتوں کے اخلاق وکردار کی عکاسی کرتا ہے۔ اگر کوئی مسلم عورت یا لڑکی پردہ میں گھر کے باہر نکلتی ہے تو را ہگیر اس کو نکلنے کے لیے راستہ دے دیتے ہیں۔یہ حجاب کی اور حجاب کرنے والی عورت یا لڑکی کی عزت وقدر ہے جو اسلام نے عطا کی ہے۔ہمیں تصور حجاب کو سمجھ کر اپنے گھروں ،خاندانوں اور سماج میں حجاب کو عام کرنا ہے۔ان خیالات کااظہار محترمہ بشریٰ ندیم نے سفیل گوڑہ ، سکندرآباد (تلنگانہ )میں مسلم گرلز ایسوسی ایشن انڈیا کی جانب سے جاری حجاب مہم کے دوران خواتین وطالبات کو مخاطب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ سماجی ومعاشرتی برائیاں پھیلنے کی واحد وجہ یہی ہے کہ پردہ کے احکامات کو ہم نے بھلادیا ہے۔
حجاب کے متعلق لوگوں میں شعور بیدار کرنے کی ضرورت ہے۔ مسلمانوں میں اکثریت پردہ کرنے والوں کی ہے۔لیکن کچھ نادان بہنیں بے پردہ عورتوں کو دیکھ کر متاثر ہوجاتی ہیں اور یہ سمجھ بیٹھتی ہیں کہ حجاب کرنے سے وہ بیک ورڈ نظر آرہی ہیں یا پھر حجاب میں رہتے ہوئے تعلیم وتربیت اور ترقی کی راہوں پر ہم گامزن نہیں ہوسکتے۔یہ ایک غلط فہمی سے بڑھ کر کچھ نہیں ہے اس کو اپنے ذہنوں سے نکالنا ہوگا۔ حجاب کبھی تعلیم وترقی کی راہ میں رکاوٹ نہیں بنا۔ بلکہ اسلام نے تو ہر مسلم عورت کو حجاب پہن کر زندگی کے ہر شعبہ میں اپنی صلاحیتوں کو پروان چڑھانے کیلئے حوصلہ دیا اور مکمل آزادی دی۔ انہوں نے چند امہات المومنین اور صحابیات کے واقعات کو بطور مثال پیش کیا۔
محترمہ سمیرا بیگم نے حکیم پیٹ ٹولی چوکی میں خواتین وطالبات کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ہم حجاب مہم کے دوران اس بات کی کوشش کررہے ہیں۔ اپنے گھروں میں حجاب کی اہمیت وفرضیت کو قرآنی احکامات کے ذریعہ بتائیں اور انہیں ترغیب دیں کہ وہ حجاب کے سلسلہ میں ہونے والی چھوٹی چھوٹی کوتاہیوں کو دور کرکے اصلاح کرلیں۔یہاں تک کہ تقاریب ودعوتوں میں بھی اس بات کی کوشش کی جارہی ہے کہ ساتر لباس کے ساتھ ساتھ حجاب کا بھی خاص اہتمام کریں۔اکثر تقاریب کے موقع پر رشتہ داری یا دوستانہ کا خیال کرتے ہوئے حجاب کو اتار دیتے ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Hijab campaign in tilangana in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply