حکومت بڑے نوٹ بند کرنے کے صدمہ سے مرجانے والوں کو شہید کا درجہ دے: ہیمنت سورین

رانچی:جھارکھنڈ مکتی مورچہ (جے ایم ایم) پارٹی اراکین کے لیڈر اور ریاست کے سابق وزیر اعلی ہیمنت سورین نے آج اسمبلی میں وزیر اعظم نریندر مودی کے نوٹ کو منسوخ کرنے کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ نوٹ تبدیل کرنے کے دوران مرنے والوں کو شہید کا درجہ دیا جانا چاہئے۔ مسٹر سورین نے ایوان میں کہا کہ نوٹ تبدیل کرنے کے لئے بینکوں کے سامنے قطار میں کھڑے لوگ ایماندار اور غریب ہیں۔ملک کے مفاد میں لوگ قطار میں لگ کر نوٹ بدلوا رہے ہیں اور اس دوران جن کی موت ہو رہی ہے، اس نقطہ نظر سے وہ ملک کے مفاد میں اپنی جان قربان کررہے ہیں۔لہذا، انہیں شہید کا درجہ دیا جانا چاہئے۔
انہوں نے کہا کہ ایسے لوگوں کو وہی عزت اور معاوضہ ملنا چاہیے جو سرحد پر شہید ہونے والے فوجیوں کو ملتا ہے۔ اس درمیان جھارکھنڈ وکاس مورچہ (پرجاتانترک) پارٹی اراکین کے لیڈر پردیپ یادو نے مرکزی حکومت کے 500 اور 1000 روپے کے نوٹ منسوخ کرنےکے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا کہ اسے نافذ کرنے میں عوام کا خیال نہیں رکھا گیا۔انہوں نے کہا کہ نوٹ کی منسوخی کی وجہ سے آج ملک بھر کے عوام کو پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Hemant soren said declare martyr those who died due to demonetization in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply