گلبرگ سوسائٹی خونریزی کیس کے مجرموں کی سزا کا تعین 9جون تک موقوف

احمد آباد: گجرات کے شہر احمد آباد میں ایک خصوصی عدالت نے، جس نے 2002کے گودھرا فساد کے بعد 24افراد کو گلبرگ سوسائٹی خونریزی کیس میں مجرم قرار دیا تھا، پیر کے روز سزا کی مقدار تعین کرنے کا فیصلہ 9جون تک موقوف کر دیا۔
استغاثہ نے مطالبہ کیا تھا کہ ان تمام مجرموں کو پھانسی دی جائے یا عمر قید کی سزا سنائی جائے۔ متاثرین کی پیروی کرنے والے ایڈوکیٹ ایس ایم وورا نے بھی مجرم قرار دیے جانے والوں کو عبرت آمیز سزا دیے جانے کا مطالبہ کیا۔ اس سے قبل پیر کے روز ہی سزا کے تعین کے حوالے سے جرح کے دوران عدالت نے مجرموں کے خلاف سازش اور ریپ کے الزامات واپس لے لیے ۔
یاد رہے کہ2002کے گجرات فسادات کے دوران گلبرگ سوسائٹی پر فسادیوں نے حملہ کر کے سابق کانگریس ممبر پارلیمنٹ احسان جعفری سمیت69افراد کو ہلاک کر دیا تھا۔28فروری2002کو کیے جانے والے اس ہلاکت خیز حملہ میں فسادیوں نے کئی مکانات نذر آتش کر دیے تھے۔39افراد کو زندہ جلا دیا گیا تھا۔
اس کیس کی سماعت سپریم کورٹ کی، جس نے کہ31مئی تک مقدمہ فیصل کرنے کو کہا تھا، نگرانی میں کی جارہی تھی۔اور2جون کو خصوصی عدالت کے جج پی بی ڈیسائی نے 66ملزموں میں سے 24کو مجرم قرار دیا تھا ۔
اس سے قبل 29اگست2012کو خصوصی عدالت نے اپنے فیصلہ میں32ملزموں بشمول ایک ریاستی وزیر کو مجرم قرار دیا تھا۔ایس آئی ٹی نے جن66افراد کو ملزم بنایا تھا ان میں سے9گذشتہ14سال سے جیل میں بند ہیں۔ جبکہ باقی ضمانت پر ہیں۔اس مقدمہ میں کم و بیش338گواہوں سے جرح ہوئی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Gulbarg society case prononcement of quantum of punishment adjourned to june 9 in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply