گجرات میں کسانوں کو دودھ پھینک مظاہرہ

احمد آباد:گجرات میں کسانوں کی بلا تاخیر قرض معافی کے مطالبے پر آج او بی سی ایکتا منچ اور ٹھاکورسینانے کئی مقامات پر سڑکوں پر دودھ پھینک کر مظاہرہ کیا اور ریاست کی ڈیریوں کو دودھ کی فراہمی بند نہیں کرنے پر آج رات سے گھیراؤ کی دھمکی دی۔ دونوں تنظیموں کے لیڈران الپیش ٹھاکور، جنہوں نے ریاست میں شراب بندی کے لئے سخت قانون لانے کے لئے حکومت پر دباؤ بنانے کی ایک کامیاب مہم چلائی تھی، اور ان کے تقریبا 40 دیگر حامیوں کو یہاں ایس جی ہائی وے پر جائیڈس ہسپتال چوراہا کے قریب سڑک پر دودھ پھینک کر مظاہرہ کرنے کے دوران پولیس نے حراست میں لے لیا۔ انہوں نے دعوی کیا کہ آج تقریبا آٹھ سے دس ہزار گاوں کے دودھ سے جڑے کسانوں نے دودھ کی فراہمی بند کردی ہے جس کا اثر کل نظر آئے گا۔
ساتھ ہی انہوں نے الزام لگایا کہ ریاست میں دو اہم ڈیریوں کے منتظم ریاستی وزیر شنکر چودھری اور جیٹھا بھرواڑ کسانوں کی قرض معافی کے خواہاں نہیں ہیں۔ انہوں نے خبردار کیا کہ اگر ڈیریوں نے دودھ کی فراہمی بند نہیں کی تو ان کی تنظیم ان کاگھیراو کرے گی۔ ادھر اس مظاہرے اور آج دودھ کی فراہمی ٹھپ رہنے سے متعلق افواہوں کے درمیان پوری ریاست میں دودھ کی فراہمی عام دنوں کی طرح ہی رہی۔ سوشل میڈیا پر اس طرح کی افواہ کی وجہ سے لوگ شبہ میں رہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Gujarat dairy farmers demand loan waiver spill milk in protest in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply