ہندوستان میں مسلمانوں کی آبادی میں خطرناک حد تک اضافہ ہو رہا ہے:گری راج سنگھ

دربھنگہ: بھارتیہ جنتا پارٹی کے سینئر لیڈر اور مرکزی وزیرمملکت برائے مائیکرو اسکیل اینڈ میڈیم انٹرپرائزز گری راج سنگھ نے ایک بار پھر متنازعہ بیان د یتے ہوئے مسلمانوں کا نام لئے بغیر کہا کہ اس ملک میں چونکہ ایک مخصوص فرقہ آبادی کنٹرول کے تئیں سنجیدہ نہیں ہے اس لیے آبادی کنٹرول کے لئے فوری طور پر قانون بنانے کی ضرورت ہے۔
مسٹر سنگھ نے منگل کے روز دربھنگہ میں پارٹی کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کسی بھی ملک کی ترقی میں روز بروز بڑھتی آبادی سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔ انہوں نے آبادی کی بے قابو رفتار کے لئے ایک مخصوص فرقہ کو لعن طعن کرتے ہوئے کہا کہ ایک فرقہکے لوگ تو دو بچوں کے نعرے پر عمل کر رہے ہیں لیکن دوسرے طبقہ کے لوگ اس سلسلے میں سنجیدہ نہیں ہیں۔
جب بھی انہیں کچھ کہا جاتاہے تو مذہب کا حوالہ دے کر تنازع پیدا کر دیتے ہیں، یہی وجہ ہے کہ ایک بچہ ان کی انگلی پکڑے چلتا ہے تو دوسرا کندھے پر بیٹھا رہتا ہے تیسرا بچہ گود میں ہوتا ہے تو چوتھا بچہ پیٹ میں ہوتا ہے اور ایک بچہ ان کے پیچھے بھی چلتا ہے۔مسٹر سنگھ نے خود کو ہندوو¿ں کا بڑا حامی بتاتے ہوئے کہا کہ صرف بنگلہ دیش اور پاکستان ہی نہیں بلکہ دنیا کے کسی بھی کونے سے جب بھی کوئی ہندو ہندوستان آئے گا تو ا سے قانوناً رہنے ہی اجازت دی جائے گی۔
انہوں نے اشاروں ہی اشاروں میں جموں کشمیر کے سلسلے میں بھی سخت لہجے میں کہا کہ ہندوستان میں دو قانون ، دو نشانات، دو سربراہ کا معاملہ نہیں چلے گا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Griraj singh advocates for a law to control population in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply