نکسلیوں کے خلاف کارروائی یا مزاحمت کے دوران ہلاک شدگان کے معاوضہ میں اضافہ:وزیر داخلہ

نئی دہلی:مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے پارلیمنٹ میں آج کہا کہ ماونواز تشدد میں جان گنوانے والے سکیورٹی اور شہریوں دونوں کے لیے حکومت سے ملنے والے معاوضے کی رقم بڑھائی جائے گی۔ لوک سبھا میں وقفہ سوال میں ماؤنواز تشدد سے مارے گئے سکیورٹی اور شہریوں کے شہریوں کو ملنے والے معاوضے میں فرق پر اعتراض کئے جانے پر مسٹر سنگھ نے کہا کہ اس بارے میں ایک نوٹ تیار کیا گیا ہے اور اسے مرکزی کابینہ کے اجلاس میں پیش کیا جائے گا۔
اس میں ماؤنواز تشدد میں جان گنوانے والے سیکورٹی اہلکاروں اور شہریوں دونوں کے لئے معاوضہ کی رقم میں کافی اضافہ کئے جانے کی تجویز ہے۔ اس سے پہلے وزیر داخلہ مملکت ہنس راج اہیر نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ ماونواز تشدد سے دوچار علاقوں میں تعینات سکیورٹی کی ذمہ داری مرکزی حکومت کی ہوتی ہے۔ لہذا ان شہید ہونے یا معذور ہونے پر مدد دینا مرکز کی ذمہ داری ہے۔
مرکزی حکومت ہلاک ہونے والے سکیورٹی کے اہل خانہ کو 15 لاکھ روپے کا معاوضہ دیتی ہے جس میں انشورنس کی دس لاکھ روپے کی رقم بھی شامل ہوتی ہے۔مسٹر ا??ر نے کہا کہ شہریوں کو معاوضہ ریاستی حکومت کی ذمہ داری ہوتی ہے تاہم مرکزی حکومت انہیں ایک لاکھ روپے کی امدادی رقم اور تین لاکھ روپے کی گرانٹ دیتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مہاراشٹر میں 25 لاکھ روپے، چھتیس گڑھ میں 15 لاکھ روپے، اڑیسہ میں 10 لاکھ روپے اور تلنگانہ اور آندھرا پردیش میں 30-40 لاکھ روپے دیے جاتے ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Govt mulling increase compensation for victims of naxalite violence in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply