بھگوڑے جوہری میہول چوکسی کو ہندوستان واپس لانے کی کوششوں کو جھٹکا

نئی دہلی: پنجاب نیشنل بینک (پی این بی) سے دھوکہ دھڑی کرنے کے ملزم میہول چوکسی کو ہندوستان واپس لانے کی کوششوں کو اس وقت زبردست جھٹکا لگا جب اس نے ہندوستانی شہریت ترک کر کے جزائر غرب الہندکے ایک جزیرے اینٹی گوا میں واقع ہندوستانی ہائی کمیشن میں اپنا پاسپورٹ جمع کردیا۔
چوکسی کے اس اقدام کو اسے ہندوستان کے،جہاں وہ بینک قرضہ فریب دہی معاملہ میں کئی ایجنسیوں کومطلوب ہے، حوالے کیے جانے سے بچنے کی ایک کوشش بتایا جارہا ہے۔
59سالہ چوکسی نے اینٹی گوا میں واقع ہندوستانی ہائی کمیشن میں اپنے ہندوستانی پاسپورٹ کے ساتھ 177ڈالرز بھی جمع کرائے۔اینٹی گوا حکام کے مطابق اس نے جولی ہاربر مارکس اینٹی گوا نام سے اپنا نیا پتہ بھی دیا ہے۔وزارت خارجہ نے کہا تھا کہ میہول چوکسی دوہری شہریت نہیں رکھ سکتا۔اینٹی گوا میںمیہول چوکسی کی حوالگی کے لیے ہندوستان کے کیس کی سماعت کی جارہی ہے۔
اگرچہ ہندوستان اور اینٹی گوا میں حوالگی کا کوئی دو طرفہ معاہدہ نہیں ہے لیکن حکومت ارب پتی جوہری کو جزیرے کے ایک نئے قانون کے تحت ،جس کی رو سے دولت مشترکہ کے کسی ملک کے بھگوڑے کو اسی کے ملک واپس بھیجا جا سکتا ہے،ہندوستان واپس لانے کی کوشش کر رہی ہے۔میہول چوکسی کو 2018میں اینٹی گوا اور باربودا کی شہریت دی گئی تھی۔
اور اس نے گذشتہ سال 15جنوری کو انیٹی گوا سے وفاداری کرنے کا حلف لیا تھا۔تقریباً دو ہفتہ بعد 29جنوری کو سی بی آئی نے ایک کیس درج کیا تھا اور چوکسی اور اس کے بھتیجے نیرو مودی کے خلاف تحقیقات شروع کردی تھیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Fugitive businessman mehul choksi in antigua surrenders indian passport in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.