غیرت کے نام پر داماد کو قتل کرنے کے معاملہ میں 4گرفتار ،سسر کی خود سپردگی

چنئی:جنوبی ہند کی ریاست تمل ناڈو میں غیرت کے نام پر ایک دلت لڑکے کو قتل کرنے کے معاملہ میں ابھی تک چار افرا دکو گرفتار کر لیا گیا۔ دریں اثنا اس دلت لڑکے نے جس اونچی ذات کی لڑکی سے شادی کی تھی اس کے باپ نے عدالت میں خود سپردگی کر دی لیکن کہا کہ وہ بے قصور ہے اور اس کا اس حملہ میں اس کا کوئی ہاتھ نہیں ہے۔
یاد رہے کہ گذشتہ روزکچھ غنڈوں نے سر عام ایک نو شادی شدہ جوڑے کو بری طرح پیٹنے کے بعد لڑکے کو جان سے مار ڈالا۔ یہ واردات اتوار کے روز تیروپور کے اودومل پیٹ میں ہوئی۔کوشلیہ نامی اس لڑکی نے جو ایک اعلیٰ ذات کی تھی شنکر نام کے ایک دلت لڑکے سے 8ماہ پہلے شادی کر لی تھی۔ جس پر دولہن کے رشتہ داراس قدر مشتعل تھے کہ 8ماہ بعد موقع ملتے ہی انہوںنے کچھ بائیک سوار غنڈوں سے ان دونوں پر اس وقت دھار دار ہتھیاروں سے حملہ کرا دیا جب وہ ایک بازار میں کچھ خریداری کر رہے تھے۔اس اچانک حملہ سے شنکر اپنا بچاؤ نہ کر سکا اور اس نے موقع پر ہی دم توڑ دیا جبکہ کوشلیہ شدید زخمی ہو گئی۔ اس کے سر میں گہرے زخم آئے ہیں اور اس کی بھی حالت نازک بتائی جاتی ہے۔
لیکن وہ بیان دینے کی حالت میں ہے اور اس نے اپنے بیان میں اپنے شہور کے قتل کا ذمہ دار اپنے گھر والوں کو ٹہرایا ہے۔اور پولس کو یہ بھی بتایا کہ اس نے اس سے پہلے بھی اپنے گھر والوں سے دھمکیاں ملنے کی شکایت کی تھی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Four killers of tamil nadu dalit boy arrested father in law surrenders in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply