سپریم کورٹ نے میجر کے خلاف ایف آئی آر پر جموں و کشمیر حکومت سے وضاحت طلب کر لی

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے حکومت جموں و کشمیر کو حکم دیا ہے وہ اس امر کی وضاحت کرے کہ وادی کے شوپیان ضلع میں مظاہرین پر فائرنگ کے لیے ،جس میں 3افراد ہلاک ہوئے تھے، فوجی اہلکار کے خلاف ایف آئی آر کیوں کرائی گئی ہے۔
چیف جسٹس دیپک مشرا کی سربراہی میں ایک تین ججی بنچ نے ریاستی پولس کو حکم دیاکہ میجر ادتیہ کمار کے خلاف ایف آئی آر کی بنیاد پر کوئی تشدد آمیز کارروائی نہ کرے۔
سپریم کورٹ کا یہ حکم میجر کمار کے والد لیفٹننٹ کرنل کرم ویر سنگھ کی اس عذرداری پر جاری کیا گیا ہے جس میں ایف آئی آر خارج کرنے اور ڈیوٹی کے مطابق کام کرنے والے فوجیوں کے وقار کا تحفظ کرنے کی استدعا کی گئی تھی۔
عدالت عظمیٰ نے مرکز کو بھی نوٹس جاریکیا ہےاور اٹارنی جنرل کے کے وینو گوپال سے کہا ہے کہ وہ حکومت کی نمائندگی اور عدالت کی معاونت کریں۔

Title: explain why fir was filed against army personnel supreme court asks jk govt in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply