کولکاتا میں ایک طالبعلم کے قتل کے جرم میں8افراد کو سزائے موت

کولکاتا: کولکاتا کی ایک عدالت نے منگل کے روز شمالی24پرگنہ کے بامن گاچھی میں ایک 21سالہ سوربھ چودھری نام کے طالبعلم کے قتل کے جرم میں 8افراد کو سزائ موت سنادی۔یاد رہے کہ اپنے دتہ پوکھر محلہ میں غیر قانونی شراب کشید کرنے اور منشیات کا دھندہ کرنے والوں کے خلاف صدائے احتجاج بلند کرنے پر اس طالبعلم کو کچھ افراد نے اغوا کر کے5 جولائی2014کو ہلاک کر دیا تھا۔
بعد ازاں سوربھ کی لاش جسے ٹکڑے ٹکڑے کر دیا گیا تھا،دتہ پوکھر اور بامو گاچھی ریلوے اسٹیشنوں کے درمیان ایک بورے میں پڑی پائی گئی تھی۔اس21سالہ طالبعلم کو جو بیراتی کے مرینالینی دتہ کالج میں زیر تعلیم تھا، ایک گروپ نے اس کے گھر کے باہر سے ہی اغوا کر لیا تھا۔اس کے لواحقین مجرموں کو سزائے موت دیے جانے کا ہی مطالبہ کر رہے تھے۔ اس کے گھر والوں ، دوستوں اور پڑوسیوں نے گذشتہ ہفتہ ایک ریلی بھی کی تھی۔ جس میں تمام قاتلوں کو پھانسی دینے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔گذشتہ جمعہ کو باراست عدالت نے اصل ملزم شیمل کرماکر سمیت 12افراد کو قصور وار قرار دیا تھا۔
پولس نے تحقیقات کرتے ہوئے 15میں سے 14ملزموں کو گرفتار کر لیا تھا اور ستمبر 2014میں41 گواہیوں کے ساتھ فرد جرم داخل کر دی تھی۔9ملزموں شیمل کرماکر، سمن سرکار، سمن داس، سومناتھ سردار ، امر بروئی ، تپاس بسواس، تارک بسواس، راکیش برمن اور تن سمادار کو اڈیشنل ڈسٹرکٹ جج دامن پرساد نے مجرم قرار دیا تھا۔ایک ملزم انوپ تعلقدار کو بری کر دیا گیا تھا جبکہ ایک اتم شکاری سلطانی گواہ بن گیاتھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Eight sentenced to death for 2014 murder of college student in kolkata in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply