اترپردیش میں پودے خراب کرنے کے جرم میں قید8گدھے جیل سے رہا

لکھنؤ: اترپردیش کے 8گدھوں کو اس وقت کھلی فضا میں سانس لینے کا موقع ملا جب سوچھ بھارت پراجکٹ کے لیے جیل کے دروازوں کے باہر رکھے گئے پودوں کو کھاجانے اور پھولوں کے گملے توڑنے کے جرم میں انہیں 3روز کی سزائے قید کے بعد اورئی کی ضلع جیل سے رہا کر دیا گیا۔ان کی اوران کے ساتھ شامل دیگر جانوروں کی اس حرکت سے جیل انتظامیہ کو50ہزار روپے کا نقصان ہوا ہے۔
ان گدھوں کو اس حلف نامے کے بعد کہ آئندہ ان کے گدھے جیل کی عمارت کے آس پاس کبھی نہیں دکھائی دیں گے، ان کے مالکوں کے حوالے کر دیا گیا۔جیل سپرنٹنڈنٹ سیتا رام شرما نے کچھ اس طرح روداد بیان کی کہ جیل ایڈمنسٹریشن نے سوچھ بھارت مشن کے تحت جیل کیمپس میں شجر کاری کا منصوبہ بنایا تھا۔ اور ا سکے لیے دہلی اور آگرہ سے پودے لائے گئے تھے ۔
لیکن گذشتہ کچھ روز کے دوران بکرے ، بکریوں، گایوں اور گدھوں نے انہیں تباہ و برباد کر دیا۔ہم نے ان جانوروں کو پکڑ لیا اور بکرے و گایوں کو ان کے مالکوں کو یہ کہتے ہوئے دے دیا کہا کہ آئندہ وہ اپنے جانوروں کو کھلا نہ چھوڑیں۔لیکن گدھوں کے مالکوںکا پتہ نہیں لگ سکا اس لیے انہیں جیل کی ہی ایک پرانی خالی عمارت میں بند کر دیا گیا۔
لیکن مالکوں کے وہاں آجانے اور انکے معذرت کرنے کے بعد کہ آئندہ اپنے گدھوں کو کھلا چھوڑنے کی غلطی نہیں کریں گے ان گدھوں کو بھی رہا کر دیا گیا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Eight donkeys spent three days in ups orai jail for eating plants destroying flower pots in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
Tags: , ,

Leave a Reply