الیکشن کمیشن نے عام آدمی پارٹی کے20ممبران اسمبلی کو نااہل قرار دینے کی سفارش کی

نئی دہلی: دہلی کے وزیر اعلیٰ و عام آدمی پارٹی کے سربراہ اروند کیجری وال کو اس وقت زبردست جھٹکا لگا جب الیکشن کمیشن آف انڈیا نے ان کی پارٹی کے 20اراکین اسمبلی کو ممبر اسمبلی ہوتے ہوئے کسی اور منفعت بخش عہدے پر بھی فائز ہونے کی پاداش میں نااہل قرار دینے کی سفارش کی ۔اگرصدر جمہوریہ نے اس سفارش کو تسلیم کر لیا تو دہلی اسمبلی میں عام آدمی پارٹی کی طاقت 67سے کم ہو کر47رہ جائے گی۔
منفعت بخش عہدے پر اکم کرتے رہنے کے حوالے سے تنازعہ اس وقت شروع ہوا جب 30سالہ وکیل پرشانت پٹیل نے2015میں صدر کے دفتر میںایک درخواست دی جس میں عام آدمی پارٹی کے ممبران اسمبلی کو پارلیمانی سکریٹریز کے طور پر تقرر کو چیلنج کیا گیا تھا۔اس درخواست کی بنیاد پر کانگریس نے بھی 2016میں ایک درخواست داخل کر کے21 اراکین اسمبلی کو نااہل قرار دینے کا مطالبہ کیا تھا۔
جن اراکین اسمبلی کو نااہل قرار دیا گیا ان میں پروین کمار(جنگ پورہ اسمبلی حلقہ)، شردکمار(نریلا)، آدرش شاستری(دوراکا ساو¿تھ ،ویسٹ)، مدن لال(کستوربا نگر)،شیو چرن گوئل(موتی نگر،وسطی)،سنجیو جھا(براڑی )، سریتا سنگھ(روہتاس نگر)، نریش یادو (مہرولی ،ساو¿تھ)،راجیش گپتا(وزیر پور نارتھ)، راجیش رشی(جنک پوری)، انل کمار باجپائی(گاندھی نگر)، سوم دت (صدر)، اوتار سنگھ کالرا(کالکا جی)، وجندر گرگ وجے(راجندر نگر،ساو¿تھ ویسٹ)، جرنیل سنگھ(راجوری گارڈن)،کیلاش گہلوت(نجف گڑھ)، الکا لامبا (چاندنی چوک)، منوج کمار(کونڈلی)، نتن تیاگی(لکشمی نگر) اور سکھ ویر سنگھ(منڈکا) ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Ec disqualifies 20 aap mlas for holding office of profit in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply