اترپردیش اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کوسیکولر ووٹوں کی تقسیم کا ہی فائدہ ہوا ہے: محمود مدنی

پرتاپ گڑھ:جمیعت علماءہند اتر پردیش ( محمود مدنی ) کے صوبائی سکریٹری مولانا شبیر احمد مظاہری نے کہا کہ اتر پردیش کے اسمبلی انتخاب میں سیکولر ووٹوں کی تقسیم سے بی جے پی کو مزید فائدہ حاصل ہوا ہے ،جو سیکولرزم کے دامن پر بد نما داغ ہے۔ انہوں نے یواین آئی سے بات چیت کے دوران ان تاثرات کا اظہار کیا۔
مولانا مظاہری نے کہا کہ اتر پردیش میں شکست کا سبب سیکولر پارٹیوں رسہ کشی و اختلافات سے ملک کے سیکولر ڈھانچہ کو مزید خسارہ ہوا ہے۔یہ سیاسی سیکولر پارٹیوں کیلئے ایک اہم سیاسی سبق ہے۔ مسلم اکثریتی حلقوں میں بھی بی جے پی کو علاوہ ازیں مسلم ووٹوں کے منقسم ہونے سے فائدہ پہنچا ہے۔ ہماری قیادت اور سیاست کا دم بھرنے والوں کی لاپروائی، عدم توجہی و آپسی اتحاد و اتفاق نہ ہونے کے سبب یہ نتائج آئے ہیں۔
خصوصی طور سے مسلم لیڈران کا کردار کم منفی نہیں رہا ہے۔حالات کو سمجھنے کی کوشش کیئے بغیر ایک دوسرے کے خلاف محاذ آراءسے بی جے پی کو جو فائدہ ہوا ہے اس سے مسلم سیاست حاشیہ پر آگئی ہے۔
انہوں نے دعویٰ کیا کہ سیکولر خصوصی طور سے متحد مسلم ووٹوں نے جس بھگوا پارٹی کو پندرہ سال قبل بوریہ بستر لپیٹ کر ریاست بدر کر دیا تھا آج اسی بھگوا پارٹی کا اکثریت کے ساتھ آنا صرف سیکولر ووٹوں کی تقسیم اور بی جے پی کے حمایت میں پولرائزیشن سب سے بڑا سبب ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہر عروج کا زوال لازم ہے۔اقتدار وہ شے ہے جو کسی ایک کے قبضہ میں نہیں رہتا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Division of muslim votes helped bjp in colouring up saffron in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply