سپریم کورٹ نوٹوں کی منسوخی سے متعلق درخواستوں پر 2دسمبر کو سماعت کرے گا

نئی دہلی: سپریم کورٹ نوٹوں کی منسوخی سے متعلق تمام درخواستوں کی سماعت دو دسمبر کو کرے گا۔ چیف جسٹس ٹی ایس ٹھاکر اور جسٹس ڈی وائی چندرچوڑ کی بنچ نے آج کہا کہ وہ نوٹوں کی منسوخی کے خلاف تمام درخواستوں کے علاوہ مرکزی حکومت کی منتقلی کی درخواست کی سماعت اگلے ہفتے جمعہ (دو دسمبر) کو کرے گی۔ اٹارنی جنرل مکل روہتگی نے بنچ کو بتایا کہ انہوں نے نوٹوں کی بندی کے معاملے پر عدالت کے سامنے حکومت کی جانب سے حلف نامہ دے دیا ہے۔ایک درخواست گزار کی جانب سے جرح کر رہے سینئر وکیل کپِل سبل نے دلیل دی کہ لوگ سڑکوں پر بھوکے مر رہے ہیں۔لوگوں کے پاس نقد رقم نہیں ہے۔انہوں نے مرکز سے جاننا چاہا کہ آخر وہ اس صورت حال سے کیسے نپٹےگا۔
ایک درخواست گزار منوہر لال شرما نے بھی دلیل دی کہ لوگوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔نوٹوں کی منسوخ? سے کوئی لیڈر پریشان نہیں ہے، بلکہ عوام پریشان ہیں۔اس کے بعد چیف جسٹس نے مسٹر روہتگی سے پوچھا کہ وہ حقیقی واقعہ سے آگاہ کرائیں۔عدالت نے کہا کہ اگر مندرجہ بالا دلیلوں میں دم ہے تو یہ ایک سنجیدہ معاملہ ہے۔ عدالت عظمی دو دسمبر کی شام دو بجے تمام مسائل پر غور کرے گی۔ کئی درخواست گزاروں نے نوٹوں کی منسوخی کے خلاف عرضیاں داخل کی ہیں، جبکہ مرکزی حکومت نے ملک کے مختلف حصوں میں دائر درخواستوں کو منتقل کرنے کی درخواست کی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Demonetisation supreme court defers hearing of petitions against ban to december 2 in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply