دہلی ہائی کورٹ نے انصاری کوپیرول پر رہا کرنے سے انکار کر دیا اب وہ جیل سے ہی الیکشن لڑیں گے

نئی دہلی: دہلی ہائی کورٹ نے بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کے شہ زور لیڈر مختار انصاری کو اترپردیش اسمبلی انتخابات میں انتخابی مہم چلانے کے لیے پیرول پر رہا کرنے کا نچلی عدالت کا فیصلہ باطل قرار دے کر نا کا پیرول منسوخ کر دیا۔
انہیں اب جیل میں رہ کر ہی الیکشن لڑنا پڑے گا۔ جسٹس مکتا گپتا نے الیکشن کمیشن کی وہ عرضی منظور کر لی جو اس نے انصاری کو پیرول دیے جانے کے خلاف دہلی ہائی کورٹ میں دائر کی تھی۔کمیشن نے اپنی درخواست میں کہا تھا کہ ان کے پیرول پر باہر آنے سے قانون و انتظام پر برا اثر پڑے گا اور وہ گواہوں کو بھی متاثر کر سکتے ہیں۔
کمیشن کی درخواست کو قبول کرتے ہوئے عدالت نے انصاری کا پیرول منسوخ کر دیا۔۔انصاری پوروانچل کے شہ زور لیڈروں میں شامل ہے اور وہ مؤ سے بی ایس پی کے ٹکٹ پر اسمبلی کا الیکشن لڑرہے ہیں۔ انصاری بھارتیہ جنتا پارٹی ممبر اسمبلی کرشن آنند رائے کے قتل کے ملزم ہیں۔

Title: delhi high court cancels mukhtar ansaris custody parole | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply