پتنگ اڑانے والے چینی مانجھے کی فروخت پر دہلی میںپابندی

نئی دہلی: دہلی حکومت نے یوم آزادی کے موقع پر پتنگ اڑانے والے کانچ ودھات کی آمیزش سے تیار مانجھے سے دو بچوں اور ایک 22سالہ نوجوان کی گلا کٹ جانے سے موت ہوجانے کے اندوہناک واقعہ کے بعد نائیلان، پلاسٹک اور چینی مانجھے کی فروخت، پیداوار، اسٹوریج اور استعمال پر آج پوری طرح سے پابندی لگا دی۔
حکومت کے ایک اہلکار نے بتایا کہ نوٹیفکیشن مسودہ جاری کرکے کہا گیا ہے کہ پتنگ اڑانے کا دھاگہ جو دھاردار ہے یا جسے شیشوں، دھات یا کسی دھار دار چیز سے دھاردار بنایا گیا ہے اس پر قومی دارالحکومت میں پابندی عائد پر کردی گئی ہے۔
صرف کپاس سوت یا قدرتی ریشوں سے بنے دھاگے سے ہی پتنگ اڑانے کی اجازت ہوگی۔ افسر نے بتایا کہ نوٹیفکیشن کا مسودہ پیش کیا جا رہا ہے اور اس پر 60 دن کی مدت کے دوران لوگوں سے اعتراض طلب کیا جائے گا جس کے بعد حتمی نوٹیفکیشن جاری کیا جائے گا۔واضح رہے کہ ایک تین سال کی بچی سانچی گوئل اور ایک چار سال کا بچہ ہیری مختلف علاقوں میںاپنی کاروں کی چھت سے سر باہر نکال کر سفرسے لطف اندوز ہو رہے تھے کہ مانجھا ان کا گلا کاٹتا ہوا نکل گیا۔
اسی نوعیت کے ایک واقعہ میں ایک22سالہ نوجوان ظفر خان مغربی دہلی میںایک فلائی اوور سے گذر رہا تھا کہ ایک پتنگ کا مانجھا اس کے گلے میں الجھ گیااس نے اسے نکالنے کی کوشش کی تو اس کی بائیک کا توازن بگڑ گیا جس سے وہ گر پڑا اور اس کے سر سے بے تحاشہ خون بہنے لگا جس سے اس کی بھی موقع پر ہی موت ہو گئی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Delhi government bans chinese manja in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply