دہلی بی جے پی صدر کی رہائش گاہ پر آدھی رات کو حملہ کرنے کے الزام میں دو بھائی گرفتار

نئی دہلی: نامعلوم حملہ آوروں نے اتوار کو رات دیر گئے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے دہلی یونٹ کے صدر منوج تیواری کی سرکاری رہائش گاہ میں گھس کر توڑ پھوڑ کی۔ مسٹر تیواری نے آج صبح ٹویٹ کیا رات تقریباً3بجے 159نارتھ ایونیو کی میری سرکاری رہائش گاہ پر آٹھ دس لوگوں نے حملہ کیا۔ ذرائع کے مطابق گزشتہ رات اس واقعہ کے وقت مسٹر تیواری گھر پر موجود نہیںتھے۔ پولیس معاملے کی تفتیش کررہی ہے۔تیواڑی نے کہا کہ یہ جان لیوا حملہ تھا۔ اس میں ان کے دو ملازمین زخمی ہوئے ہیں۔
حملہ کے حوالے سے دو افراد گرفتار کیے جا چکے ہیں۔حال ہی میں ہوئے دہلی میونسپل کارپوریشن انتخابات (ایم سی ڈی) کے انتخابات میں مسٹر تیواری کی قیادت میں بی جے پی نے 270میں سے 181 سیٹوں پر جیت حاصل کی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ جو دو افراد گرفتار کیے گئے وہ باہم بھائی ہیں ۔رات ڈیڑھ بجے دہلی کے لوٹئین میں منوج تیواڑی کی رپائش گاہ کے عین سامنے ان دونوں بھائیوں کی کار ایک گاڑی سے جسے تیواڑی کا ایک ملازم چلا رہا تھا،ٹکرا گئی۔ جس کے بعد ان دونوں بھائیوں نے اپنے دوستوں کو بلا لیامجو لوہے کی چھڑیں لے کر ایک ٹمپو میں وہاں پہنچ گئے۔اور انہون نے ایک عام راستے سے تیواڑی کے بنگلے میں گھسنے کی کوشش کی۔

Title: delhi bjp chief manoj tiwaris house attacked 2 arrested | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply