اختلافات اپنی جگہ مگر پارلیمنٹ کی کارروائی جاری رہنی چاہئے:وزیر اعظم نریندر مودی

نئی دہلی: پارلیمنٹ کے بجٹ اجلاس میں اپوزیشن کے نوٹوں کی منسوخی کے مسئلے کو زور شور سے اٹھائے جانے کے اعلان کے درمیان وزیر اعظم نریندر مودی نے تمام سیاسی جماعتوں سے اپیل کی ہے کہ انتخابات کے وقت کچھ مسائل پر اختلافات کے باوجود پارلیمنٹ میں بامعنی بحث جاری رہنی چاہئے اور حکومت اس کے لئے تیار ہے۔ مسٹر مودی نے پارلیمانی امور کے وزیر اننت کمار کی طرف سے بجٹ اجلاس سے ایک دن پہلے طلب کی گئی کل جماعتی میٹنگ میں سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں سے یہ اپیل کی۔
مسٹر کمار نے میٹنگ کے بعد نامہ نگاروں کو بتایا کہ وزیر اعظم نے تمام رہنماؤں سے کہا کہ پارلیمنٹ ملک کی مہا پنچایت ہے اور حکومت تمام معاملات پر بات چیت چاہتی ہے۔ تمام جماعتوں کو اس میں اپنی بات رکھنی چاہئے تاکہ پارلیمنٹ کو لیڈروں کے تجربے کا فائدہ ملے۔ انہوں نے کہا کہ انتخابی مہم کے وقت کچھ گلے شکوے ہو سکتے ہیں لیکن اختلافات کے باوجود مسائل پر بحث ہونی چاہئے جس سے جمہوریت کا وقار قائم رہے۔ پارلیمانی امور کے وزیر نے کہا کہ سبھی اپوزیشن پارٹیوں کی بھی یہی رائے ہے کہ پارلیمنٹ خوش اسلوبی سے چلے اور بجٹ اجلاس کے دونوں حصوں میں نتیجہ خیز بحث ہو۔
انہوں نے کہا کہ پہلے مرحلے میں صدرجمہوریہ کے خطاب کے ساتھ ساتھ اقتصادی جائزہ اور بجٹ پیش کیا جائے گا۔ لوک سبھا میں کانگریس کے چیف وہپ جیوتر آدتیہ سندھیا نے کہا کہ حزب اختلاف چاہتا ہے کہ بجٹ اجلاس کے پہلے مرحلے میں ہی نوٹوں کی منسوخی کے معاملے پر بحث ہونی چاہئے۔

Title: debate during budget session pm narendra modi tells parties in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply