گورکھا جن مکتی مورچہ نے گورکھا علاقائی کونسل معاہدہ کی نقل سیکورٹی فورسز کی موجودگی میں نذر آتش کر دی

کولکاتہ:میں ہوئے گورکھا علاقائی کونسل معاہدہ کی کاپی کو آج گورکھا جن مکتی مورچہ کے حامیوں نے سیکورٹی فورسز کی موجودگی میں نذر آتش کردیا۔ گورکھا جن مکتی مورچہ کے اسسٹنٹ جنرل سیکریٹری وینے تمانگ نے کہا کہ ہم لوگو ں نے جی ٹی اے معاہدہ کی کاپی کو نذر آتش کرنے کے ساتھ سیمی خود مختار ادارہ اور حکومت مغربی بنگال کے ساتھ دیگر معاہدے کو ختم کرنے کااعلان کرتے ہیں۔ تمانگ نے کہا کہ مستقبل میں ہم جی ٹی اے کے انتخاب میں حصہ نہیں لیں گے۔
ہم گورکھا لینڈ کے مطالبے پر کسی قسم کا معاہد نہیں کرتے ہیں اور اگر کوئی اس انتخاب میں حصہ لیتا ہے تو وہ اپنی ذمہ داری پر انتخاب لڑے گا۔انہوں نے کہا کہ ہمارا ہڑتال جاری رہے گا۔ ریاستی وزیر سیاحت گوتم دیب نے کہا کہ ہندوستان جمہوری ملک ہے یہاں ہر کسی کو احتجاج و ہڑتال کرنے کی آزادی ہے۔انہوں نے کہا کہ جی ٹی اے معاہدہ کی کاپی جلانے کا مطلب یہ نہیں ہے کہ جی ٹی اے ختم ہوگیا ہے۔ خیال رہے کہ مرکزی حکومت، ریاستی حکومت اور گورکھا جن مکتی مورچہ کے درمیان 8جولائی 2011کو جی ٹی اے معاہدہ ہوا تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Darjeeling violence gjm protestors burn gta agreement in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply