دلتوں پر مظالم جھارکھنڈ اورگجرات میں ڈھائے جاتے ہیں بنگال میں وہ محفوظ ہیں : ممتا بنرجی

جھاڑ گرام:(یو این آئی )وزیرا علیٰ ممتا بنرجی نے آج بی جے پی کی سخت تنقید اور گجرات ماڈل پر سوالیہ نشان لگاتے ہوئے کہا کہ ”گجرات میں دلتوں کی پٹائی ڈانڈیہ میں شرکت کرنے کی وجہ سے کی جاتی ہے جب کہ بنگال میں ایسا کچھ بھی نہیں ہوتا ہے“۔بنگال میں دلتوں کے ساتھ بدسلوکی کا ایک واقعہ بھی پیش نہیں آیا ہے۔
عوامی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بنگال میں دلتوں ، پسماندہ طبقات اور اقلیتوں کے مفادات کی حفاظت کی جاتی ہے اور یہاں ہر مذہب کا احترام کیاجاتاہے۔وزیر اعلیٰ نے گزشتہ چھ سالوں میں قبائلی برادری کی ترقی کیلئے کے اقدامات کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے قبائلی بھائی اور بہنوں کو زمین پٹہ پر دی ہے۔قبائلیوں کو پنشن دی گئی ہے۔
اس کے علاوہ سیکورٹی اسکیم بھی فراہم کی جارہی ہے۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ بنگال میں مذہب اور ذات کے نام پر عوام کو تقسیم کرنے کی کوشش کامیاب نہیں ہونے دی جائے گی۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ کچھ لوگ بنگال کے عوام کو ہندو، مسلمان ، سکھ اور عیسائی کے نام پر تقسیم کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ جھار کھنڈ میں دلتوں پر حملے ہورہے ہیں اور قبائلیوں سے زمین جبراً چھینی جارہی ہے۔ہم اس کے خلاف ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Dalits are safest in bengal mamata banerjee in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply