سرحد پار سے دہشت گردی سارک کے لیے سخت تشویش کا باعث: سری لنکا وزیر اعظم

نئی دہلی:سری لنکا کے وزیر اعظم رانل وکرم سنگھے نے جنوبی ایشیا کو سرحدپار دہشت گردی سے پاک کرانے کے لیے وزیر اعظم نریندر مودی کے سخت موقف کی تعریف کرتے ہوئے کہا ہے کہ انہیں نہیں لگتا کہ اس معاملے پر ہندوستان پاکستان کے درمیان جنگ کوئی متبادل ہے۔ سری لنکا ہائی کمیشن میں مسٹر وکرم سنگھے نے بدھ کو نئی دہلی میں ایک پریس کانفرنس میں جنوبی ایشیائی علاقائی تعاون تنظیم (سارک) کی افادیت اور اس کے مستقبل پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ سارک کے سامنے آج دو مسائل ہیں۔
ایک سرحد پار دہشت گردی اور دوسرا سارک ممالک کا متحد ہو کر کام کرنا۔ اگر ہم مل کر کام نہیں کر سکتے تو سارک کا مستقبل تاریک ہو جائے گا۔انہوں نے مزید کہا کہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان چپقلش کے باعث سارک کوئی پیش رفت نہیں کر سکی۔واضح رہے کہ ہندوستان اور دیگر چار رکن ممالک نیپال، جو سارک چیرمین بھی ہے،بھوٹان، افغانستان اور سری لنکا نے سارک اجلاس کا بائیکاٹ کرنے کا اعلان کر دیا تھا جس کے باعث پاکستان کو اسلام آباد میں ہونے والی اس کانفرنس کو ملتوی کرنے پر مجبور ہونا پڑا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Cross border terror core issue for saarc sri lankan pm ranil wickramasinghe in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply