سی پی ایم نے جھار کھنڈ وزیر اعلیٰ سے دو مسلم مویشی تاجروں کو مار کر پیڑ سے لٹکادینے کا معاملہ اٹھایا

رانچی: مارکسی کمیونسٹ پارٹی (سی پی آئی ایم) پولٹ بیورو کی رکن برند کرات کی قیادت میں ایک پارٹی وفد نے رانچی میں وزیر اعلیٰ رگھو بر داس سے ملاقات کی اور ان سے کہا کہ وہ ریاست کے لٹیہار ضلع میں گﺅ رکشا سمیتی کے رضاکاروں کے ہاتھوں دو مسلمان مویشی تاجروں کو ہلاک کرنے کی تحقیقات میں مداخلت کریں۔
واضح رہے کہ جمعہ بازار میں اپنی بھینسیں فروخت کرنے کے لیے لے جارہے 32سالہ مظلوم انصاری اور13سالہ امتیاز خان نام کے دو مسلمانوں کونام نہاد گﺅ رکشا کارکنوں نے زدو کوب کرنے کے بعد ان کے ہاتھ پشت پر باندھ کر اور منھ میں کپڑا ٹھونس کر ایک درخت سے لٹکا دیا تھا ۔
محترمہ کرات نے کہا کہ جھار کھنڈ کے وزیر اعلیٰ نے بھی اعتراف کیا کہ یہ ہلاکتیں کسی ذاتی عدوت کے باعث نہیں کی گئیں۔ سی پی ایم رہنماو¿ں نے مسٹر داس کوایک میمورنڈم دیا جس میں کہا گیا ہے کہ اس کیس کی تفتیش کسی مرکزی تحقیقاتی ادارے کو سونپ دیا جائے کیونکہ موجودہ تفتیش پر اعتماد نہیں کیا جا سکتا۔
محترمہ کرات نے کہا کہ انصاری کو گﺅ رکشا سمیتی کے لوگ کافی عرصہ سے دھمکا رہے تھے کہ وہ مویشیوں کی خرید و فروخت کا کاروبار ترک کر دے اور اس کی ہلاکت کو ذاتی عداوت کا باعث بتانا د ر اصل انتظامیہ کا جھوٹ پروپیگنڈہ ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Cpim takes up latehar lynching with jharkhand cm in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply