بنگال میں بم دھماکوں، جماعتی جھڑپوں اور ایک کی ہلاکت کے ساتھ تیسرے مرحلہ کی پولنگ شروع

کولکاتا: مغربی بنگال میں 62سیٹوں کے لیے تیسرے مرحلہ کی پولنگ کا آغاز کنگریس و ترنمول کانگریس کارکنوں کے درمیان جھڑپ، بم دھماکہ اور ایک شخص کی ہلاکت کے ساتھ ہوا۔ جمعرات کو ہونے والی تیسرے مرحلہ کی پولنگ میں کولکاتا کی بھی سات سیٹوں پر ووٹ ڈالے جا رہے ہیں۔
16ہزار پولنگ اسٹیشنوں پر صبح سات بجے سے پولنگ شروع ہوئی ہی تھی کہ مرشد آباد ضلع کے جیت پور گاؤں میں مارکسی کمیونسٹ پارٹی کاایک پولنگ ایجنٹ ترنمول کانگریس کے حامیوں کے بم حملے میں ہلاک ہو گیا جبکہ تین دیگرزخمی ہوگئے۔ہلاک سی پی ایم کارکن کی شناخت شاہد الاسلام کے طور پر ہوئی ہے۔سابق وزیر انیس الرحمٰن نے جو اسی حلقہ سے سی پی ایم امیدوار ہیں ، ترنمول کانگریس پر تشدد برپا کرنے کا الزام لگایا۔انہوں نے کہا کہ انہیں بتایا گیا ہے کہ ترنمول کانگریس کے حامیوں نے متعدد بوتھوں پر قبضہ کر لیا ہے۔
بردوان میں تو عالم یہ تھا کہ غنڈے کھلے عام پستولیں لیے گھوم رہے تھے۔دریں اثنا ترنمول کانگریس کے کارکنوں نے کانگریس کے جس پولنگ ایجنٹ باسو ملپھاریاکو اغوا کر لیا تھا وہ بازیاب کرا لیا گیا۔ وہ ترنمول کانگریس کے امیدوار ایس کے نعمت علی کی فیکٹری میں بند پایا گیا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Cpi m worker killed in third phase of bengal polls in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply