وارانسی میں وزیر اعظم مودی کے خلاف پرینکا گاندھی کے بجائے اجے رائے کانگریس کے امیدوار

نئی دہلی: وزیر اعظم نریندر مودی کے انتخابی حلقہ اترپردیش کے وارانسی سے لوک سبھا کے لیے کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی کا وزیر اعظم کے مد مقابل آنے کی قیاس آرائیوں اس وقت دم توڑ دیا جب آل انڈیا کانگریس کمیٹی کی سینٹرل الیکشن کمیٹی نے پانچ بار کے ممبر اسمبلی و کانگریس لیڈر اجے رائے کو وارانسی سے پارٹی امیدواربنادیا۔

اجے رائے کا سیاسی سفر بی جے پی کے طلبا بازو اے بی وی پی سے شروع ہو کرسماج وادی پارٹی سے ہوتا ہوا اب کانگریس پر مکمل ہوا ہے۔اجے رائے نے 1996اور2007میں بی جے پی کے ہی ٹکٹ پر الیکشن جیت کر اترپردیش اسمبلی میں داخلہ پایا تھا ۔

اسکے بعد بی جے پی سے برگشتہ ہو کر سماج وادی پارٹی میں شمولیت اختیار کر لی اور اس کے ٹکٹ پر 2009میں لوک سبھا انتخابات میں کھرے ہوئے لیکن ہار گئے۔

آزاد امیدوار کے طور پر کولسلا حلقہ سے 2009کا اسمبلی ضمنی انتخاب جیت کر وہ کانگریس میں شامل ہو گئے۔

رائے ایک مقا می با اثر اور طاقتور شخص کے طور پر معروف تھے اور اپنے ساتھ ہمیشہ بندوق برداروں پر مشتمل ذاتی فوج رکھتے ہیں۔ اسی دوران وزیر اعلیٰ یوگی ادتیہ ناتھ کے انتخابی حلقہ گورکھپور سے کانگریس نے بی جے پی کے روی کشن کے خلاف مدھو سدن تیاوڑی کو اپنا امیدوار بنایا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Congress pick for varanasi ajay rai was once a bjp mla known as local strongman in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.