اترپردیش میں کانگریس پر لوگوں کا اعتماد بڑھ رہا ہے: شیلا دکشت

گورکھپور: دہلی کی سابق وزیر اعلیٰ اور کانگریس کی سرکردہ رہنما شیلا دکشت نے آج کہا کہ اترپردیش کے عوام آئندہ سال یہاں ہونے والے اسمبلی انتخابات میں تبدیلی کے حق میں ہیں اور امید بھری نظروں سے کانگریس کی جانب دیکھ رہے ہیں۔
محترمہ دکشت نے یہاں یو این آئی سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ جس طرح سے تبدیلی آسام اور دہلی میں ہوئی ہے ویسی ہی تبدیلی اترپردیش کے 2017 کے انتخابات میں ہونے والی ہے۔انہوں نے کہا کہ ملک کی سب سے بڑی ریاست گزشتہ 27 برسوں میں بہت پیچھے ہوگئی ہے۔ یہاں ترقی کی رفتار تیز کرنے کے لئے عوام کنبہ پرستی اور ذات پرستی کا خاتمہ چاہتے ہیں۔
اترپردیش کانگریس کی طرف سے وزیر اعلیٰ کے عہدہ کی امیدوار محترمہ دکشت نے کہا کہ 27 سال یوپی بدحال عوامی پیغام یاترا آئندہ اکتوبر تک مکمل ہوجائے گی۔ اس یاترا میں کانگریس کو اچھی حمایت مل رہی ہے لوگ بدعنوانی، مہنگائی اور ناقص حکمرانی سے عاجز آچکے ہیں اور کانگریس کی جانب امید بھری نظروں سے دیکھ رہے ہیں۔
محترمہ دکشت نے کہا کہ بہار کے طرز پر اترپردیش میں فرقہ وارانہ طاقتوں کو روکنے کے لئے کسی عظیم اتحاد کی تشکیل پر ابھی غور نہیں کیا جارہا ہے اور پارٹی خود کو مضبوط و مستحکم کرنے میں لگی ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ عام آدمی مہنگائی سے پریشان ہے جب کہ مرکزی حکومت اس پر قابو پانے میں ناکام ہے۔
کشمیرکے حالات سے متعلق اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے محترمہ دکشت نے کہا کہ وہاں کی صورت حال بہت پیچیدہ ہوگئی ہے اور امن قائم کرنے کے لئے سبھی کو اعتماد میں لے کر اجتماعی کوششوں کی ضرورت ہے۔ اترپردیش کے آئندہ اسمبلی انتخابات میں محترمہ پرینکا گاندھی کو انتخابی مہم میں اتارنے سے متعلق ایک سوال کے جواب میں دہلی کی سابق وزیر اعلیٰ نے کہا کہ ریاست کے ہر گوشہ سے یہ مطالبہ ہورہا ہے مگر اس سلسلہ میں فیصلہ محترمہ گاندھی کو ہی کرنا ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Congress is getting strong in up says shiela dixit in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply