کانگریس نے اڑی حملہ کی روشنی میں پارلیمنٹ کاخصوصی اجلاس بلانے کا مطالبہ کیا

نئی دہلی:کانگریس نے اڑی دہشت گردانہ حملہ کے بعد حکومت کے اقدامات پر عدم اطمینان ظاہر کرتے ہوئے ملک کی سلامتی کی صورت حال کا جائزہ لینے اور پاکستان کو دہشت گرد ملک قرار دینے کے لئے پارلیمنٹ کا خصوصی اجلاس طلب کرنے کا مطالبہ کیا۔
کانگریس کے ترجمان ابھیشیک منوسنگھوی نے پارٹی کی معمول کی بریفنگ میں نامہ نگاروں سے کہا کہ اڑی میں فوجی ٹھکانے پر دہشت گردانہ حملے کے نو دن ہوچکے ہیں۔ پاکستان کے خلاف اس دوران کوئی ٹھوس قدم نہیں اٹھایا گیا اور اس سے ہندوستان کی پوزیشن کمزور نظر آرہی ہے۔ انہوں نے الزام لگایا کہ حکومت پاکستان کو منہ توڑ جوابے دینے میں ناکام رہی ہے۔ مسٹر سنگھوی نے کہا کہ ملک کی سلامتی سنگین خطرے میں ہے۔ اس صورت حال پر بحث کرانے او رپاکستان کو دہشت گرد ملک قرار دینے کے لئے پارلیمنٹ کا خصوصی اجلاس طلب کیا جانا چاہئے۔
پارلیمنٹ میں بحث کا مطلب ہے کہ پورا ملک اتفاق رائے سے پاکستان کو دہشت گرد ملک قرار دینے کے حق میں ہے۔ کانگریس کے ترجمان نے کہا کہ ان کی پارٹی اس بات میں یقین رکھتی ہے کہ سخت معاملات میں سخت فیصلے لئے جانے چاہئیں۔ پاکستان کو پہلے ہی دہشت گرد ملک قرار دیا جانا چاہئے تھا۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس پاکستان کے خلاف پوری طرح سے اقتصادی پابندی عائد کرنے کا مطالبہ کرتی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Congress demands special parliament session to discuss security situation post uri attack in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply