آسام میں پانچویں کی طالبہ کو اجتماعی جنسی زیادتی کے بعد زندہ جلا دیا گیا

گوہاٹی:آسام کے ناگاؤں ضلع میں تین لڑکوں نے ایک11سالہ لڑکی سے جنسی زیادتی کے بعد اسے زندہ جلا دیا ۔ضلع کے لالونگ گاؤں کی رہائشی اس بچی کو جو پانچویں کلاس کی طالبہ تھی سنگین حالت میں ایک اسپتال میں داخل کیا گیالیکن وہ جانبر نہ ہو سکی۔
متوفیہ کے نزعی بیان اور ملزموں کو شناخت کر لینے پر پولس نے کاررواائی کرتے ہوئے دوملزموں کو گرفتار کر لیا جبکہ تیسرا ابھی فرارہے۔نوگاؤں کے پولس سپرنٹنڈنٹ شنکر رائے مے نے بتایا کہ تینوں ملزمان گاؤں کے ہی رہائشی ہیں۔ متوفیہ تینوں سے واقف تھی۔
ان تینوں نے یہ واردات اس وقت کی جب اس بچی کے والدین گھر پر نہیں تھے اور بچی گھر پر تنہا تھی۔ان تینوں نے اس سے جنسی زیادتی کی اور پھر اس پر مٹی تیل کا کنستر انڈیل کر آگ لگا دی۔واضح رہے کہ اسی ماہ کی17تاریخ کو بھی اسی قسم کی ایک واردات ہو چکی ہے۔

Title: class 5 girl gang raped burnt alive in assam | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply