لکھنؤ کے ایک اسکول میں چھٹی کلاس کی طالبہ نے پہلی جماعت کے بچے کو چاقو گھونپ دیا

لکھنؤ: ہریانہ کے شہر گوڑگاؤں کے ریان انٹرنیشنل اسکول کے سات سالہ طالبعلم کے قتل کی واردات کے طرزپر اترپردیش کے دارالخلافہ لکھنؤ کے ایک اسکول مین اس وقت دوہرائی گئی جب ایک پہلی جماعت کے ایک طالبعلم کو اس کی سینیئر طالبہ نے چاقو گھونپ دیا۔
بس فرق اتنا رہا کہ ریان اسکول کے کمسن طالبعلم کی موقع پر ہی موت ہو گئی تھی جبکہ اس واردات میں بچہ صرف زخمی ہوا ہے اور اب خطرے سے باہربتایا جاتا ہے۔پولس کے مطابق ششم جماعت کی ایک طالبہ نے چھ سالہ بچے کو بلایا اور اسے ٹوائلٹ لے گئی اور وہاں اس نے سبزی کاٹنے کے چاقو سے اس پر حملہ کر دیا جس میں وہ زخمی ہو گیا ۔
اس کے سینے اور پیٹ پر زخم آئے ہیں اور ڈاکٹروں نے اسے خطرے سے باہر بتایا ہے ۔بچے کے مطابق 11سالہ طالبہ نے اس سے کہا کہ اگر وہ اس پر چاقو سے حملہ کر کے اسے زخمی کر دے تبھی اسکول میں تعطیل کا اعلان ہو سکتا ہے۔ برائٹ لینڈ اسکول کے پرنسپل نے اس واردات کو ایک روز تک پوشیدہ رکھا ۔اسے غفلت برتنے پر گرفتار کر لیا گیا۔
اس بچے کے جسم پر جو بال پائے گئے وہ حملہ آور لڑکی کے بالوں سے میل کھاتے ہیں تاہم اس کے بالوں کو ڈی این اے جانچ کے لیے بھیج دیا گیا ۔سینیئرپولس افسر دیپک کمارنے کہا کہ واردات میں چونکہ بچے ملوث ہیںاس لیے انہیں نابالغ بچوں کے لیے تشکیل دیے گئے جسٹس بورڈ (عدالت طفلاں)میں پیش کیا جائے گا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Class 1 student stabbed in lucknow school by senior she wanted a holiday in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply