بے بنیاد الزامات عائد کرنا حزب اختلاف کی عادت بن گئی ہے: وینکیا نائیڈو

نئی دہلی: اطلاعات و نشریات اور شہری ترقیات کے وزیر ایم وینکیا نائیڈو نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ میں اپوزیشن کی عادت حکومت پر بے بنیاد اور نفرت آمیز الزامات لگانے کی ہو گئی ہے اور وہ “تھوکو اور بھاگو” کی پالیسی پر چل رہی ہے۔ مسٹر نائیڈو نے پارلیمنٹ کی عمارت کے احاطے میں نامہ نگاروں سے کہا کہ وہ اپوزیشن سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ بحث کریں، بحث کریں۔
اپوزیشن کی ہمیشہ سے عادت رہی ہے کہ بے بنیاد الزامات لگا ؤ اور تماشا کرو اور دیکھو۔ انہوں نے کہا کہ اسی اپوزیشن نے پہلے وزیر خارجہ سشما سوراج، پھر راجستھان کی وزیر اعلی وسندھرا راجے اور مدھیہ پردیش کے وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان کے بارے میں یہی کیا اور اب وزیر اعظم کو نشانہ بنایا ہے۔ انہوں نے کہا کہیہ نفرت سیاسی ہتھکنڈہ ہے۔
اپوزیشن ہمیشہ سے بحث سے بھاگتی رہی ہے۔ پہلے اس نے کہا کہ بحث کرو، بحث ہوئی تو کہا کہ وزیر اعظم کو بلاؤ، وزیر اعظم آئے تو کہا کہ وہ بولیں، ہم نے کہا کہ وزیر اعظم مداخلت کریں گے اور وزیر خزانہ جواب دیں گے تو کسانوں کے مسائل یاد آنے لگے۔ مسٹر نائیڈو نے کہا کہ حزب اختلاف بتائے کہ ان کو کسانوں کا مسئلہ اٹھانے سے کس نے روکا ہے۔
بیس دن سے اوپر ہو گئے ایوان میں رخنہ ڈالے ہوئے۔ کسی نے بھی کسانوں کی بات نہیں اٹھائی۔ اب یہ اچانک سے کسان کا مسئلہ اٹھا دیا۔ انہوں نے کہا کہ اہل وطن سب دیکھ رہے ہیں کہ کیا تماشا چل رہا ہے۔ کانگریس کی عادت بن گئی ہے کہ تھوکو اوربھاگو۔ آج تک اس نے کسی بھی معاملے میں بدعنوانی یا غلط کام کا ثبوت نہیں دیا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Charges against kiren rijiju part of congress spit run tactics venkaiah naidu in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply