مرکز نے آندھرا پردیش کے لیے مالیاتی پیکیج کا اعلان کیا

نئی دہلی: مرکز نے تقریبا ڈھائی سال کے ٹال مٹول کے بعد کل رات آندھراپردیش کیلئے ایک مالیاتی پیکیج کا اعلان کیا جس میں پولاورم آبپاشی پروجیکٹ کی مکمل فنڈنگ ‘ ٹیکس رعایات اور خصوصی امداد شامل ہے لیکن ریاست کو خصوصی درجہ دینے سے گریز کیا گیا جس کا مطالبہ اصل حزب اختلاف وائی ایس آر کانگریس کے ساتھ ساتھ دیگر جماعتیں کر رہی تھیں اور اس مسئلہ پر ریاست میں احتجاج بھی کیا گیا۔
جون 2014میں تلنگانہ ریاست کی تشکیل کی وجہ سے مالی پریشانیوں سے دوچار آندھراپردیش کو ایک ریلوے زون ملے گا اور یکم اپریل 2014کو قومی پروجیکٹ قرار دیئے جانے کے بعد سے پولاورم پروجیکٹ کے آبپاشی منصوبے کا پورا خرچ مرکز برداشت کرے گا۔ تاہم ریاست اس پروجیکٹ پرعمل کرائے گی۔ وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے کل رات دیر گئے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے یہ بات بتائی۔
آندھراپردیش کو خصوصی درجہ دینے کے معاملہ میں 14 ویں فائنانس کمیشن کی جانب سے حائل رکاوٹوں کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اس زمرہ پر آنے والی رقم کے برابر رقم فراہم کی جائے گی اور5 سال تک خصوصی امدادی اقدام کی شکل میں ریاست کو دی جائے گی۔ مسٹر جیٹلی نے کہا کہ یہ رقم خارجی امدادی پروجیکٹ کی شکل میں ہوگی اور ریاست کو دو ٹیکس رعایات دی جائیں گی جن کی تفصیلات کا عنقریب سنٹرل بورڈ آف ڈائرکٹ ٹیکسس تعین کرے گا۔
آندھراپردیش کی ریاست معاشی مرکز حیدرآباد کے تلنگانہ میں چلے جانے کے بعد سے مرکز سے خصوصی درجہ کا مطالبہ کررہی تھی۔ تقسیم کے دوران تلنگانہ کے حق میں جانے والے حیدرآباد میں کئی آئی ٹی اور فارما سیوٹیکل کمپنیاں ہیں۔ مالی خسارے اور نقدی کی قلت سے دوچار ریاست کو خصوصی درجہ کی صورت میں کافی مرکزی فنڈس اور ٹیکس رعایات حاصل ہوسکتی تھیں۔
آندھراپردیش تنظیم نو قانون میں ریاست کیلئے خصوصی درجہ کا ذکر نہیں کیا گیا ہے لیکن اس وقت کے وزیراعظم منموہن سنگھ نے 20 فروری 2014کو راجیہ سبھا میں 5 سال کیلئے ریاست کو خصوصی درجہ دینے کا وعدہ کیا تھا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Centre announces special financial package for andhra pradesh in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply