کرنسی کی عارضی قلت تین روز میں دورہو جائے گی: وزیر خزانہ

نئی دہلی: مرکزی وزیر مالیات ارون جیٹلی نے کہا ہے کہ ملک میں کرنسی کی صورت حال کا حکومت نے جائزہ لیا ہے اور مسئلہ حل کرنے کے اقدامات کیے جارہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ کچھ علاقوں میں اچانک اور غیر معمولی طور پر مانگ بڑھ جانے نیز کچھ ریاستوں میں دیگر ریاستوں سے کم نقدی پہنچنے کے باعث یہ قلت ہوئی ہے جو عارضی ہے اور تین چار روز میں دور ہو جائے گی۔
انہوں نے کہا کہ حکومت ضرورت کے مطابق ریاستوں کے درمیان نوٹوں کی مناسب تقسیم کی جانب قدم اٹھا رہی ہے۔وزیر مملکت ایس پی شکلا نے کہا کہ ہمارے پاس ایک لاکھ25ہزار کروڑ روپے کی نقد کرنسی ہے۔لیکن کچھ ریاستوں کے پاس کم کرنسی ہے اور کچھ ریاستوں میں بہت زیادہ ہے۔حکومت نے صوبائی سطح پر ایک کمیٹی بنائی ہے۔
ریزرو بینک آف انڈیا نے بھی ایک صوبہ سے دوسرے صوبہ میں کرنسی بھیجنے کے لیے ایک کمیٹی تشکیل دی ہے۔اور جن ریاستوں میں نوٹو ںکی قلت ہے وہاں تین روز میں کرنسی کی نئی کھیپ منتقل کر دی جائے گی۔ یہ اطلاعات گردش کر رہی ہیں کہ ملک کے تقریباً8صوبوں کے اے ٹی ایم سے2000کے نوٹ غائب ہیں۔یہی نہیں بلکہ کئی اے ٹی ایم تو خالی پڑے ہیں۔

Title: cash crunch fm says needs three days to fix problem | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply