طلاق ثلاثہ کو جرم قرار دینے والے بل کو مرکزی کابینہ کی ہری جھنڈی

نئی دہلی: تین طلاق کو قابل سزا جرم قرار دینے والے ایک بل کو مرکزی کابینہ نے منظوری دے دی اور اب حکومت کو امید ہے کہ جمعہ سے شروع ہونے والے پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس میں اسے پارلیمنٹ کی بھی منظوری حاصل ہو جائے گی۔
اگست میں سپریم کورٹ نے اپنے ایک غیر معمولی فیصلہ میں کہا تھا کہ مسلم مردوںکا ایک ہی نشست میں لفظ طلاق کوتین بار دوہرا کر عورت کو اچانک ہی مطلقہ بنا دینا غیر آئینی ہے۔
حکومت نے کہا کہ ججوں نے مسلم خواتین کی اس بات پر اتفاق کیا تھا اکثر و بیشتر ان کے شوہرحق مساوات کی خلاف ورزی کرتے ہوئے اسکائپ یا وہاٹس اپ کے توسط تین بار طلاق دے کر عورتوں کو بے آسرا چھوڑ دیتے ہیں۔
عدالتی فرمان کے باوجود تین طلاق کا یہ رواج آج بھی جاری ہے۔اس معاملہ سے متعلق افراد کا کہنا ہے کہ مسلم خواتین(تحفظ حقوق نکاح) بل 2017 حکومت کے لیے ترجیحی ایجنڈا ہے۔ج جن وزیروں پر مشتمل گروپ نے یہ بل تیار کیا اس کے قائد وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ تھے۔

Title: cabinet clears bill that proposes to make triple talaq criminal offence in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply