روزگار اور سماجی تحفظ سے متعلق برکس کا اظہار عزم

نئی دہلی: (یو این آئی) دنیا کی سب سے زیادہ تیزی سے ترقی پذیر معیشتوں برازیل، روس، ہندوستان ، چین اور جنوبی افریقہ کی تنظیم (برکس) نے سال 2030 تک اپنی وسیع آبادی کو غربت سے نکالنے کے لئے روزگار کے مواقع، سماجی تحفظ اور پائیدار ترقی کے لئے اپنے عزم کا اظہار کیا ہے۔
برکس ممالک کے وزراء محنت کی دو روزہ کانفرنس کے اختتام پر آج یہاں جاری ایک منشور میں کہا گیا ہے کہ دنیا کی تقریبا 70 فیصد آبادی ان ممالک میں سکونت پذیر ہ?ں اور سال 2030 تک اس آبادی کو غربت سے نکالنے کے لئے سرگرمی سے کوشش کرنے کی ضرورت ہے۔ اس کے لئے روزگار کے مواقع پیدا کرنا ، معاشرے کے تمام طبقات کو سماجی تحفظ کے دائرے میں لانا اور سازگار ماحول کے مطابق مسلسل ترقی ضروری ہے۔ یہ کانفرنس 27 اور 28 ستمبر کو منعقد کی گئی،جس کی صدارت مرکزی وزیر محنت و روزگار بنڈارو دتاتریہ نے کی۔ اجلاس کے بعد جاری ہونے والے منشور کو اس سال اکتوبر میں ہونے والے برکس چوٹی کانفرنس میں شامل کیا جائے گا۔
منشور کے مطابق، تمام رکن ممالک کا خیال ہے کہ معیاری روزگار پائیدار ترقی کے لئے ضروری ہے اور یہ 2030 کے ترقیاتی ا ہداف کا مرکزی نقطہ ہے۔ جامع اور معیاری روزگار کے مواقع کرنے کے لئے تمام ممالک یکجہتی سے کوشش کریں گے جس میں روزگار کے یکساں مواقع، مناسب اجرت اور سوشل سیکورٹی دستیاب ہوگی۔ اس سے غربت کے خاتمے میں مدد ملے گی اور پائیدار ترقی کا ہدف بھی حاصل ہوگا۔
منشور میں کہا گیا ہے کہ روزگار کے مواقع بڑھانے اور اس سے متعلق مسائل کو حل کرنے کے لئے تمام رکن ممالک ایک دوسرے سے تعاون کریں گے اور روزگار کی معلومات کے نظام کو مضبوط بنائیں گے۔
برکس ممالک میں غیر منظم شعبے میں کام کرنے والی افرادی قوت کو منظم سیکٹر میں لانے کو ایک بڑےمسئلہ کے طور پر تسلیم کیا گیا اور کہا گیا کہ غیر منظم شعبے کے افرادی قوت کو بہتر ذریعہ معاش ،سہولیات اور سوشل سکیورٹی فراہم کرنے کے لئے تمام ممالک ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کریں گے۔ منظم سیٹکر کی سہولیات میں غیر منظم سیکٹر کے مزدوروں کے لئے توسیع کی جائے گی۔ تمام ممالک کا خیال ہے کہ اس سے مزدوروں کے معیار زندگی کو بہتر بنانے اور پیداوری اور مسابقہ کے جذبے کو فروغ ملے گا۔
تمام رکن ممالک نے اس پر رضامندی ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ مہارت کی ترقی اور سماجی تحفظ کے دائرے کو وسیع کرکے غیر منظمی شعبے میں روزگار کے مواقع بڑھائے جا سکتے ہیں۔ اس سے انہیں روزگار کا تحفظ بھی فراہم کیا جاسکتا ہے۔ تمام ممالک نے اعتراف کیا ہے کہ غیر منظم سیکٹر کو کم کرنے کے لئے نئے تجربے کئے جانے چاہیے ، تاکہ ملازمین اور مزدوروں کو سماجی تحفظ کے دائرے میں لایا جا سکے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Brics summit in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
Tags:
What do you think? Write Your Comment