نکسلیوں کوکانگریس لیڈر دگ وجے سنگھ کی پشت پناہی حاصل ہے:بی جے پی ترجمان

نئی دہلی:بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) نے کانگریس پر الزام لگایا ہے کہ وہ ماؤ نوازوں کی مدد کر رہی ہے۔ یہی نہیں بلکہ اس نے یہان تک کہا کہ یو پی اے کے مشاورتی بورڈ کا بائیں بازو کے انتہا پسندوں سے تعلق ہے۔

اس کی مزید وضاحت کرتے ہوئے بی جے پی کے ترجمان سمبت پاترا نے کہا کہ نہ صرف راہل گاندھی کے اتالیق اورکانگریس لیڈر دگ وجے سنگھ کے نکسلیوں سے تعللقات ہیں بلکہ کانگریس کی قومی مشاورتی کونسل نکسلیوں کی مدد کر رہی ہے۔

سمبت پاترا نے کہا کہ ایک طرف تو سابق وزیر اعظم من موہن سنگھ نکسلزم کو ملک کے لیے سب سے بڑا خطرہ بتا رہے ہیں اور وہیں دوسری جانب سابق کانگریس صدر سونیا گاندھی نے قومی مشاورتی کونسل اور پلاننگ کمیشن میں ان لوگوں کا تقرر کیا ہے جن کے براہ راست نکسلیوں سے تعلقات ہیں۔

پاترا نے حقوق انانی کے کارکنوں کی ماؤ باغیوں کی سرگرمیوں میں شامل رہنے کے حوالے سے یہ بھی الزام لگایا کہ پولس کے چھاپوں کے دوان ایک فون نمبر بھی پولس کو ملا ہے جو کسی اور کا نہیں بلکہ دگ وجے سنگھ کا ہے ۔دگ وجے سنگھ نے آج تک اس حوالے سے کوئی صفائی نہیں دی کہ یہ موبائیل نمبر ان کا نہیں ہے۔اس سے تو یہی لگتا ہے کہ یہ انہی کا نمبر ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Bjps sambit patra accuses congress digvijaya singh of backing naxals in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply