ہارنے والے امیدوار راجپوت نے احمد پٹیل کی جیت کو گجرات ہائی کورٹ میں چیلنج کر دیا

احمد آباد: گجرات میں 8 اگست کو راجیہ سبھا کی تین سیٹوں پر ہوئے انتخابات میں شکست کے بعد حکمراں بی جے پی کے تیسرے امیدوار بلونت سنگھ راجپوت نے آج صدر کانگریس سونیا گاندھی کے سیاسی سیکرٹری اور کانگریس کے فاتح امیدوار احمد پٹیل کی جیت کو چیلنج کرتے ہوئے اسے منسوخ کرنے اور مبینہ طور پر غلط طرز عمل کا سہارا لینے کی وجہ سے ان پر 6 سال تک کسی بھی طرح کا الیکشن لڑنے پر روک لگانے کے لئے گجرات ہائی کورٹ میں عرضی دائر کی۔
کانگریس میں رکن اسمبلی اور وہپ کا عہدہ چھوڑ کر بی جے پی میں آئے مسٹر راجپوت نے عدالت میں دائر اس عرضی میں انہیں ملنے والے کانگریس کے دو باغی اراکین کے ووٹوں کو الیکشن کمیشن کے ذریعہ منسوخ کئے جانے کو غلط اور تسلیم کرنے کے رٹرننگ افسر کے پہلے کے فیصلہ صحیح بتایا ہے۔ سپریم کورٹ کے وکیل ستیہ پال جین کے ذریعے آج جسٹس ایم آر شاہ کے سامنے دائر اس درخواست میں یہ بھی کہا کہ مسٹر پٹیل کوووٹ دینے والے کانگریس کے دو ممبران نے اپنے ووٹ کئی لوگوں کو دکھائے تھے جنہیں منسوخ کیا جانا چاہئے۔
مسٹر پٹیل نے 44 ممبران کو جبراََ بنگلور کے ایک ریزارٹ میں قیدرکھا اور ان کی تفریح پر کثیر رقم خرچ کی جو غلط ہے، لہذا ان کی جیت کو باطل قرار دیا جائے اور چھ سال تک ان کے الیکشن لڑنے پر پابندی لگا دی جائے ۔ توقع ہے کہ مسٹر راجپوت کی عرضی پر 21اگست کوسماعت کی جائے گی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Bjps balwantsinh rajput who lost to ahmed patel in rs polls challenges ec ruling in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply