کیا ملائم سنگھ اپنی پارٹی کے بدعنوان لیڈروں کے خلاف کارروائی کرسکتے ہیں؟بی جے پی

نئی دہلی:بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی)نے آج کہا کہ سماجوادی پارٹی کے سربراہ ملائم سنگھ یادو نے اترپردیش میں اپنی پارٹی کی حکومت اور اس کے وزرا پر سخت تبصرہ کرکے مسٹر اکھیلیش یادو کو ناکام وزیر اعلی قرار دینے کے ساتھ ہی 2017 کا انتخابی بگل بجنے سے پہلے ہی پیٹھ دکھا دی ہے۔
پارٹی کے ترجمان سدھارتھ ناتھ سنگھ نے یہاں ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ مسٹر ملائم سنگھ یادو نے اب تک پانچ باربے حد سخت تبصرہ کیا ہے۔انہوں نے اپنی پارٹی کے وزرا پر زمینوں پر غیر قانونی قبضہ کرنے،شراب کے غیر قانونی ٹھیکے چلانے اور ایس پی رہنماؤں کے ذریعہ غریبوں کا استحصال کرنے کے سنگین الزامات لگائے ہیں۔انہوں نے یہ بھی کہا ہے کہ ایس پی کے بڑے رہنما آرام پسند ہوچکے ہیں۔
مسٹر سنگھ نے کہا کہ ایسے میں بی جے پی مسٹر یادو سے کچھ سوال پوچھنا چاہتی ہے۔مسٹر یادو بتائیں کہ انہوں نے 2012 میں اپنے لئے ووٹ مانگے تھے اور اپنے بیٹے کو وزیراعلی بنادیا۔اب آپ نے مسٹر اکھلیش یادو کو ایک ناکام وزیر اعلی قرار دیا ہے تو کیا وہ اترپردیش کے عوام سے معافی مانگیں گے یا پھر وہ اپنے بیٹے کے خلاف کوئی کارروائی کریں گے۔
انہوں نے کہا کہ ایس پی کے سربراہ نے غیر قانونی قبضے کا ذکر کیا ہے اور متھرا کے جواہر باغ کا بھی ذکر کیا ہے،تو کیا وہ ان ایس پی رہنماؤں کے خلاف کوئی قانونی کارروائی کریں گے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Bjp dares mulayam singh yadav to act against sp leaders in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply