تحقیقاتی ادارے پختہ ثبوت کے بعد ہی کسی کے خلاف کارروائی کرتے ہیں: وزیر مالیات

نئی دہلی:وزیر خزانہ ارون جیٹلی نے کہا ہے کہ پختہ ثبوت ہونے پر ہی تفتیشی ایجنسیاں کسی بھی شخص کے خلاف کارروائی کرتی ہیں۔ مسٹر جیٹلی نے مودی حکومت کے تین سال کی مدت میں اپنی وزارت کی حصولیابیوں پر گفتگو کے دوران نامہ نگاروں کے سوال کے جواب میں کہا کہ تحقیقاتی ایجنسیوں کو عدالت میں رپورٹ پیش کرنی ہوتی ہے اس لئے جب تک پختہ ثبوت نہیں ہوتا کارروائی نہیں کی جاتی ہے۔
کانگریس لیڈر اور سابق وزیر خزانہ پی چدمبر م کے ذریعہ اپنے بیٹے کارتی چدمبرم کے دفاتر پر سی بی آئی کی چھاپہ ماری اور آر جے ڈی کے سربراہ لالو پرساد یادو کی طرف سے ان کے خاندان کے افراد کے دفاتر پر انکم ٹیکس محکمہ کی چھاپے ماری کی کارروائی کو سیاست پر مبنی قراردئے جانے کے بارے میں پوچھے جانے پر مسٹر جیٹلی نے ان لوگوں کے نام لئے بغیر کہا کہ جب تک پختہ ثبوت نہیں ہوتا تب تک کسی کے خلاف کارروائی نہیں کی جاتی ہے۔
خیال رہے کہ سی بی آئی نے پچھلے ماہ کارتی چدمبرم کے کئی دفاتر اور انکم ٹیکس محکمہ نے مسٹر لالو پرساد یادو کے ٹھکانوں پر چھاپے ماری کی تھی۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Based on evidence arun jaitley on cases against karti chidambaram lalus kin in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply