بندیل کھنڈ میں مصنوعی چینی انڈوں کی فروخت باعث تشویش

ہمیر پور: اترپردیش کے بندیل کھنڈ میں چینی انڈے اور فائبر کے چاول کی فروخت نے غذائی تحفظ محکمہ کی نیند اڑا دی ہے۔ محکمہ کی ٹیم نے دونوں غذائی اشیا کا سراغ لگانے کیلئے چھا پے مارنا شروع کر دیے۔ غذائی تحفظ محکمہ کے اہلکار وی کے شرما نے بتایا کہ بندیل کھنڈ میں چینی انڈے اور فائبر کے چاول کی فروخت سے غذائی تحفظ محکمہ کے کان کھڑے ہو گئے ہیں۔ اطلاع کی بنیاد پر غذائی تحفظ دستے نے کچھ دکانوں کا معائنہ کیا مگر اب تک مبینہ انڈوں کی برآمدگی نہیں ہو سکی ہے۔
مسٹر شرما نے بتایا کہ چینی انڈا کیمیکل سے بنا کر تیار کیا گیا ہے۔ یہ سستا ہونے کے ساتھ ساتھ صحت کیلئے نقصان دہ بھی ہے۔ ہندوستانی انڈے کی قیمت عام طور پر پانچ روپے فی انڈاہے جبکہ چین ساختہ سنتھیٹک انڈے ایک روپیہ فی انڈاہے۔ سستا ہونے کی وجہ سے اس کا بازار بڑھتا جا رہا ہے۔فوڈ سکیورٹی افسر نے بتایا کہ انڈے کی شناخت ہے کہ اس کا خول کچھ کالاپن لئے ہوتا ہے، بلب کی روشنی میں دیکھنے سے اس کے اندر کالاپن دکھائی دیتا ہے اور اس کو ہاتھ میں پکڑتے ہی اس اندر کا زرد مادہ بالکل چھتر بتر ہو جاتا ہے جبکہ دیسی انڈوں میں یہ خصوصیات نہیں پائی جاتیں۔
مسٹر شرما نے انڈے فروخت کرنے والوں کو آگاہ کیا ہے کہ اس قسم کے انڈے کی فروخت کہیں ہو تو اس کی اطلاع فوری طور پر دی جائے جس سے مجرم کے خلاف سخت کارروائی کی جا سکے۔انہوں نے بتایا کہ اسی طرح چین میں بنے سنتھیٹک پلاسٹک چاول کےلئے بھی تلاشی جاری ہے۔ اس کیلئے بہت سے خریداروں کے یہاں چھاپاماری کی گئی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Artificial chinese eggs sold in bundelkhand in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
What do you think? Write Your Comment