فوج و بنگال حکومت کے تعلقات میں کوئی تبدیلی نہیں: فوجی افسر

کلکتہ:مغربی بنگال میں مختلف ٹول پلازہ پر حکومت کی اطلاع کے بغیر فوجی جوانوں کی تعیناتی پر ممتا بنرجی کے سخت اعتراض اور پھر مرکزی و ریاستی حکومتوں کے درمیان لفظی تکرار کے بعد فوج کے ایک سینئر افسر نے آج کہا کہ مغربی بنگال حکومت کے ساتھ تعلقات میں ذرہ برابر فرق نہیں آئے گا اور افواج اور مقامی انتظامیہ کے درمیان تعاون باہمی حسب دستور جاری رہے گا۔
کلکتہ میں نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے ایسٹرن کمانڈر میجر جنرل اسٹاف ماجی جین آر نگراج نے کہا کہ مقامی سطح پر ہمارے تعلقات بہت ہی اچھے ہیں اور اس میں کوئی تبدیلی نہیں آئے گی۔ اس مہینے آغاز میں مختلف ٹول پلازہ پر فوجی جوانوں کی تعیناتی پر ممتا بنرجی کی قیادت والی حکومت نے مرکزی حکومت کے رویہ کے سخت مذمت کرتے ہوئے کہا تھا کہ ریاستی حکومت کی اجازت کے بغیر جوانوں کی تعیناتی افسوس ناک اور ایمرجنسی سے بدتر حالات کی عکاس ہیں۔.وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی نے اس وقت تک اپنا دفتر چھوڑنے سے انکار کردیا تھا جب تک فوجی جوانوں کو واپس بلانہیں لیا جاتا ہے۔
گزشتہ ہفتے مرکزی وزیر دفاع منوہر پاریکر نے وزیرا علیٰ ممتا بنرجی کو خط لکھ کہا تھا کہ فوجی جوانوں کی تعیناتی پر اعتراض کی وجہ سے افواج کی حوصلہ شکنی ہوئی ہے۔ میجر سے جب ٹول پلازہ پر روپیہ وصولنے کے الزامات سے متعلق پوچھا گیا تو انہوں نے کہا کہ فوج ایک مضبوط ادارہ ہے۔اس کیلئے اس طرح کی حرکت کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ہمارے سامنے اس طرح کی کوئی خبر نہیں ہے۔اور یہ ہندوستانی افواج کے اقدار کے خلاف ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستانی افواج سرحد پر تمام چیلنجوں کا مقابلہ کرنے کو تیار ہے۔انہوں نے ہندوستانی افواج ہمہ وقت اپنے ہم وطنوں کو باہری دشمن سے محفوظ رکھنے کیلئے تیار ہے اور کسی بھی صورت حال کا جواں مردی سے مقابلہ کرسکتی ہے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Army bengal government relation unchanged army official in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply