سکھ مخالف فسادات کے ملزموں ٹائٹلر اور سجن کو پا کانگریس نے پارٹی کے دھرنے سے واپس کر دیا گیا

نئی دہلی: دہلی کے کسی دور کے دو قدآورلیڈروں سجن کمار اور جگدیش ٹائٹلر کو اس وقت زبردست خفت اٹھانا پڑی جب کانگریس صدر راہل گاندھی کی آمد سے پہلے ہی دہلی کانگریس نے سابق مرجکزی وزیر اور1984کے سکھ مخالف فسادکے اصل ملزم جگدیش ٹائٹلر اور سجن کمار ک راجگھاٹ سے، جہاں آج کانگریس صدر اور کارکنوں کا دھرنا اور احتجاج ہو رہا ہے، جانے کہہ دیا گیا۔کانگریس لیڈر ارویندر لوولی کے مطابق یہ دھرنا انفرادی طور پر نہیں بلکہ پارٹی سطح پر ہے۔
ایک رپورٹ کے مطابق ٹائٹلر کی واپسی سے قبل اجے ماکن کو ان سے با ت کرتے دیکھا گیا۔واضح ہو کہ پارلیمنٹ میں کوئی کام کاج نہ ہونے اور ںریندر مودی حکومت کے خلاف احتجاج میں کانگریس کے ملک گیر برت کے ایک جزو کے طور پر راہل گاندھی راج گھاٹ پر ایک دھرنے اور احتجاج کی قیادت کریںگے۔
کانگریس کارکنان بھی بی جے پی حکومت کے خلاف اور پورے ملک میں فرقہ ورانہ ہم آہنگی اور ترقی کو فروغ دینے کے حق میںتمام ریاستی اور ضلع ہیڈ کوارٹروں میں دن بھر کا برت رکھے ہوئے ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: anti sikh riot case accused jagdish tytler sajjan kumar asked to leave from in Urdu | In Category: ہندوستان  ( india ) Urdu News

Leave a Reply