اترپردیش میں سردلہر کی زد میں آکر 143 ہلاک

لکھنؤ: اترپردیش کے بیشتر اضلاع میں چمکیلی دھوپ کے باوجود یخ بستہ سرد لہر کے باعث گذشتہ24گھنٹے کے دوران مزید 40افراد ہلاک ہو گئے جس سے امسال سردی سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 143ہو گئی۔
ریاست کے دارالخلافہ اور مضافات میں صبح سویرے زبردست کہرے کے باعث عام زندگی نہایت متاثر رہی ۔حد بصارت بہت کم ہوجانے سے تقریباً ایک درجن ٹرینیں منسوخ کر دی گئیں۔
ضلع مجسٹریٹ کے حکم پر ریاستی دارالخلافہ میں اسکولوں میں سرمائی تعطیلات میں ایک روز کی توسیع کر دی گئی۔ منگل کے روز زبردست کہرے کے باعث سڑک حادثات میں تین افراد ہلاک ہوگئے۔
کئی علاقوں میں حدبصارت کم ہو کر 15تا20میٹرہی رہ گئی۔ محکمہ موسمیات کے مطابق یہ سرد لہر کچھ روز تک جاری رہے گی۔ صورت حال میںپیر کے بعد ہی کچھ سدھار آنا متوقع ہے۔
لکھنؤ نگر نگم کے ایک اہلکار کے مطابق لکھنؤ میںشدید سرد لہر سے 700سے زیادہ آوارہ گائیں اور کتے ہلاک ہوئے ہیں۔ریاست میں0.92.9ڈگری کے ساتھ سہارنپور سرد ترین مقام رہا۔
جبکہ نجیب آباد میں1.7، کھیری اور سلطان پور میں1.8مرادآباد میں2.5اور میرٹھ میں2.8ڈگری درجہ حرارت رہا۔ لکھنؤ میں درجہ حرارت 4.8سیلشیس ریکارڈ کیا گیا۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Another 40 die due to cold wave in uttar pradesh in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News
Tags: , ,

Leave a Reply