مرکزی وزیر ماحولیات انل مادھو دوے انتقال کر گئے

نئی دہلی: بھارتیہ جنتا پارٹی کے ممبر پارلیمنٹ اورجنگلات و ماحولیات کے مرکزی وزیر مملکت (آزادانہ چارج) انل مادھو دوے کا جمعرات کی صبح یہاں انتقال ہو گیا۔ وہ 61 سال کے تھے۔ صبح اچانک طبیعت بگڑ جانے کی وجہ سے انہیں آل انڈیا انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سائنس(ایمس) لے جایا تھا جہاں علاج کے دوران ان کا انتقال ہو گیا۔جنگلات اور ماحولیات کی وزارت کے ترجمان نے بتایا کہ مسٹر دوے کا صبح کوئمبٹور جانے کا پروگرام تھا لیکن اسی درمیان ان کی طبیعت بگڑ گئی اور انہیں فوری طور پر ہسپتال لے جانا پڑا۔
وزیر اعظم نریندر مودی نے مسٹر دوے کے انتقال پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے اسے اپنا ذاتی نقصان بتایا ہے۔مسٹر مودی نے ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا، ”میں کل شام کو انل دوے کے ساتھ تھا۔ ان کے ساتھ پالیسی معاملات پر بات چیت کر رہا تھا۔ ان کا انتقال میرا ذاتی نقصان ہے۔ لوگ انہیں فعال عوامی خادم کے طور پر یاد رکھیں گے۔ ماحولیاتی تحفظ کی سمت میں وہ کافی محنتی تھے“۔ مرکزی وزیر ایم وینکیا نائیڈو، سریش پربھو، اسمرتی ایرانی، وغیرہ نے بھی مسٹر دوے کی موت پر رنج وغم کا اظہار کیا ہے۔
مدھیہ پردیش سے راجیہ سبھا کے ایم پی مسٹر دوے وزیر ماحولیات بننے سے پہلے ہی ماحولیاتی تحفظ کی مہم میں کافی سرگرم رہے تھے۔نرمدا دریا کے تحفظ کے لئے انہوں نے اپنی ایک تنظیم بنا رکھی تھی۔ وہ ماحولیات کے میدان میں کافی مطالعہ کرتے تھے اور موسمیاتی تبدیلی پر پیرس معاہدے کی ہندوستان کی جانب سے منظوری کئے جانے میں مسٹر دوے نے اہم کردار ادا کیا تھا۔ وزیر اعظم کی ماحولیات سے منسلک منصوبوں میں وہ ایک اہم پالیسی ساز اور مشیر تھے۔

Title: anil madhav dave environment minister passes away | In Category: ہندوستان  ( india )

Leave a Reply