علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں طلبا میں خونریز گروہی تصادم، آتشزنی،2ہلاک

علی گڑھ: ہفتہ کی نصف شب میں علی گڑھ مسلم یونیورسٹی(اے ایم یو) کیمپس میں اعظم گڑھ اور سنبھل سے تعلق رکھنے والے طلبا میں ہوئے خونریز گروہی تصادم میں ایک سابق طالبعلم سمیت دو افراد ہو گئے۔ڈی آئی جی علی گڑھ رینج گووند اگروال نے بتایا کہ تشدد اس وقت شروع ہوا جب ایک حریف گروہ نے ممتاز ہاسٹل کے مہتاب نام کے ایک رہائشی طالبعلم پر حملہ کر دیا اور اس کے کمرے کو نذر آتش کر دیا۔ شکایت درج کرانے کے لیے متاثرہ طالبعلم کو زخمی حالت میں پراکٹر کے دفتر لے جایا گیا۔ جیسے ہی اس حملہ کی خبر پھیلی دونوں حریف گروپ آمنے سامنے آگئے اور ایک دوسرے پر حملے شروع کر دیے۔مسلم یونیورسٹی کے ترجمان راحت ابرار نے بتایا کہ پراکٹرکے دفتر کے باہر ہی حریف گروپوں میں فائرنگ کا تبادلہ ہوا جس میں مہتاب نام کے28سالہ ایک طالب علم کی گولی لگنے سے موقع پر ہی موت ہو گئی جبکہ دوسرا طالبعلم شدید زخمی ہو گیا۔ اس کی حالت نازک دیکھتے ہوئے اسے دہلی کے ایک اسپتال ریفر کر دیا گیا جہاں وہ بھی بے تحاشہ خون بہہ جانے کے باعث انتقال کر گیا۔ اس کی شناخت20سالہ واقف کے طور پر کی گئی ہے۔ تشدد پر آمادہ طلبا نے ایک جیپ اور نصف درجن موٹر سائیکلیں بھی پھونک دیں اور کیمپس کی عمارتوں میں بھی آتشزنی شروع کر دی اور پراکٹر کے دفتر کی عمارت کو بھی آگ لگادی۔اے ایم یو کے ایک اہلکار نے بتایا کہ اترپردیش کے اعظم گڑھ اور سنبھل علاقہ کےطلبا میں کافی عرصہ سے چپقلش چل رہی تھی ۔ڈی آئی جی اگروال نے مزید بتایا کہ پراکٹر کے دفتر کو نذر آتش کر دینے سے وہاں رکھی تمام دستاویزات راکھ ہو گئیں۔اس واردات سے یونیورسٹی انتظامیہ نے آئندہ دو ہفتہ کے اندر کیمپس میں مقی تمام ہاسٹلوں سے ناپسندیدہ عناصر کو نکال باہر کرنے کی مہم چلانے کا اعلان کر دیا۔دریں اثنا ایم اے پولیٹیکل سائنس کے ایک طالبعلم محسن اقبال سمیت8طلبا کے خلاف تشدد برپا کرنے کے حوالے سے ایف آئی آر درج کر لی گئی۔ حالت پر قابو پانے کے لیے یونرسٹی انتظامیہ نے کیمپس میں پولس طلب کر لی اور سریع الحرکت دستے تعینات کر دیے گئے۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Amu campus violence leaves 2 dead raf deployed in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply