بی جے پی صدرامیت شاہ نے حزب اختلاف کے اتحاد کو دروغ گوئی اور جھوٹ کا ٹولہ قرا دیا

نئی دہلی:وزیر دفاع نرملا سیتا رمن نے امبیڈ کر انٹرنیشنل سینٹر میں میڈیا کے نمائندوں سے بات کرتے ہوئے بی جے پی کے صدر امیت شاہ کے حوالے سے کہا کہ انہوںنے ملک کے مفادات میں کام کرنے کا عزم کیا ہے اورحزب اختلاف کی پارٹیوں کے اتحاد کو جھوٹ اور دروغ گوئی کا پلندہ سے تعبیرکیا ۔

شاہ نے ’ ’شہری نکسل ازم ‘ ‘کے معاملہ پرمہاراشٹر حکومت کی تعریف کی اور کہا کہ کانگریس اسے محض ووٹ بینک کی خاطر ایک مسئلہ بنا رہی ہے۔ جن سنگھ کے بانی شیاما پرساد مکھرجی اور دین دیال اپادھیائے کی تصویر کی گلپوشی اور انہیں خراج عقیدت پیش کرنے کے بعد 2019میں2014سے زیادہ بڑی کامیابی حاصل کرنے کے عزم کے ساتھ شروع ہونے والے قومی ایکزیکٹیو اجلاس میں اتفاق رائے سے طے پایا کہ بی جے پی امیت شاہ کی قیادت میں ہی2019کے انتخابات لڑے گی۔

اس لیے اس وقت تک پارٹی کے تنظیمی انتخابات موخر کر دیے گئے۔ اجلاس کی صدارت بی جے پی کے صدر امت شاہ نے کی جبکہ تنظیم کے سیکرٹری جنرل رام لال نے نظامت کی۔ اجلاس میں، قومی نائب صدر، جنرل سیکریٹری، تنظیم کے ساتھ ایسوسی ایٹ، ریاستی صدور، ریاستی تنظیم، جنرل سکریٹریز وغیرہ شامل ہیں۔

ذرائع کے مطابق اس موقع پر مسٹر شاہ نے ملک بھر سے آئے پارٹی عہدیداروں کو ’ناقابل شکست بی جے پی‘ کا فارمولہ سمجھایا اور ا انہیں تلقین کی کہ 2019 میں پارٹی کو 2014 کے مقابلے مزید اکثریت سے کامیاب بنا نے کے لیے تندہی سے لگ جائیں۔ انہوں نے تنظیم کو مضبوط بنانے، حکومت کی منصوبہ بندی کے عمل میں تیزی لانے اور اس کی تشہیر نچلی سطح تک کرنے اور انتخابات کی تیاری بوتھ سطح پر کرنے پر زور دیا۔ اجلاس میں جنوبی ریاستوں میں پارٹی کی جڑیں مضبوط کرنے، مغربی بنگال میں پارٹی کارکنوں پر ہو رہے حملے، ملک کے مختلف حصوں میں سیلاب کی صورتحال اور کچھ جگہوں پر انسداد درج فہرست ذات و قبائل مظالم قانون کے سلسلے میں جاری تحریک پر بھی ا اظہار خیال کیا۔

اجلاس میں پارٹی صدر میت شاہ، وزیر اعظم نریندر مودی ، بزرگ رہنما لال کشن آڈوانی،وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ کے علاوہ وزیر خزانہ اورن جیٹلی، وزیر نقل و حمل نتن گڈکری، ویزر خارجہ سشما سوراج اور کئی دیگر سینیئر اور بزرگ پارٹی لیڈر شرکت کر ہے ہیں۔ایکزیکٹیو کمیٹی کے اجلاس میں مندرجہ فہرست ذات و قبائل قانون میں ترمیم کے بعد کے حالات اورچار ریاستوں میں ہونے والے اسمبلی انتخابات کے علاوہ 2019کے عام انتخابات کے لیے حکمت عملی پر بھی غور خوض کیا جائے گا۔

ایکزیکٹیو کمیٹی کے اجلاس میں آسام میں نیشنل رجسٹر آف سٹیزنس (این آر سی) پر بھی تبادلہ خیال کیاجائے گا۔ایکزیکٹیو کمیٹی کے اجلاس میں شرکت کے لیے مزاحیہ اداکار راجو سری واستو، اترا کھنڈ کے سابق وزیر اعلیٰ رمیش پوکھریال نشانک اور بزرگ لیڈر سبرامنیم سوامی سمیت کئی اہم لیڈر نئی دہلی میں ہیں۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Amit shah calls united opposition an opposition of lies in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply