مہاڈ پل حادثہ کے 22لاپتہ بس مسافروں میں سے تین کی لاشیں پائی گئیں

ممبئی: مہاراشٹر کے رائے گڑھ میں ممبئی اور گواکے درمیان قومی شاہراہ پر بدھ کی صبح ایک پل کے سیلاب کے زور سے ٹوٹ جانے سے جن دو بسوں کے دریائے ساوتری میں بہہ جانے سے 22افراد لاپتہ ہوگئے تھے ان میں سے تین کی لاشیں جمعرات کی صبح مل گئیں۔
جبکہ ریاستی ٹرانسپورٹ کمپنی کی ان دونوںبسوں کا ابھی تک کوئی سراغ نہیں لگ سکا ہے۔حکام نے اس بات کی تصدیق کردی ہے کہ سیلاب میں پل کے بہہ جانے کے بعد دو مسافر بسیں پانی میں گر گئیں۔ شدید بارش سے امدادی کاموں میں مشکلات پیدا ہو رہی ہیں ۔جبکہ ٹریفک کو دوسرے راستے پر موڑ دیا گیا ہے۔
ریاستی وزیر اعلیٰ دیویندر فردنویس نے اس حادثہ پر ٹویٹ کیا کہ مہا بلیشور کے علاقے میں شدید بارش کے بعد دریا میں پانی کی سطح میں اضافہ ہو گیا تھا اور اسی وجہ سے پرانا پل ٹوٹ گیا۔
ان کے مطابق حادثے میں ہلاک ہونے والے لوگوں کے بارے میں ابھی کوئی واضح معلومات نہیں ہیں، کیونکہ جب یہ حادثہ ہوا اس وقت وہاں اندھیرا تھا۔ وزیر اعلیٰ کے مطابق اس علاقے میں دو پل ہیں اور پرانا پل منہدم ہوا ہے جبکہ ٹریفک دوسرے نئے پل سے گذارا جا رہا ہے ۔

Read all Latest india news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from india and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: 3 bodies found as rescue efforts resume at collapsed mahad bridge in Urdu | In Category: ہندوستان India Urdu News

Leave a Reply