نظم : ”امن ہر شخص کی ضرورت ہے “

مہتاب قدر

امن ہر شخص کی ضرورت ہے
اس لئے امن سے محبت ہے

چین سے کس کو ہے مفر آخر
کون بے موت مرنا چاہتا ہے

دہشت و خوف کس کا ارماں ہے
خود کشی کون کرنا چاہتا ہے

ہر غریب و امیر کی خواہش

چین ہے امن ہے محبت ہے

امن ہر شخص کی ضرورت ہے

امن ہر گھر کی آرزو بھی ہے
امن ہر دار کی ضرورت ہے

صحتمندی بھی امن ہی چاہے
امن بیمار کی ضرورت ہے

امن حاجت عوام کی بھی ہے
امن سرکار کی ضرورت ہے

امن دشمن بھی چاہتا ہے بہت
امن ہر یار کی ضروت ہے

امن درباریوں کی حاجت بھی
امن دربار کی ضرورت ہے

امن انسانیت کی دولت ہے

امن ہر شخص کی ضرورت ہے

امن کے صرف چاہنے سے مگر
امن برپا تو ہو نہیں سکتا

اپنے اقلام کی لئے تلوار
اپنے اشعار کی لئے پتوار

امن کے واسطے اٹھو لوگو
امن کے واسطے چلو لوگو

ہر نگارش ہو امن کی خواہاں
امن پر ساری خواہشیں قرباں

امن سے اس لئے محبت ہے
امن ہرشخص کی ضرورت ہے

Read all Latest ghazal poetry news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from ghazal poetry and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Nazamevery one needs peace in Urdu | In Category: غزلیں و شاعری Ghazal poetry Urdu News

Leave a Reply