غزل: شام سے پہلے کوئی منظر نہ دیکھ

چندر بھان خیال

دیکھ ان چڑیوں کو چڑیا گھر نہ دیکھ
لوٹ مت پیچھے کو یوں مڑ کر نہ دیکھ

ہاتھیوں کی پیٹھ پر بیٹھا ہے دن
شام سے پہلے کوئی منظر نہ دیکھ

اپنی دیواروں سے کچھ باہر نکل
صرف خالی گھر کے بام و در نہ دیکھ

پتھروں کے کرب کو محسوس کر
میرے سینے پر رکھا پتھر نہ دیکھ

کر گیا سورج سبھی کو بے لباس
اب کوئی سایہ کوئی پیکر نہ دیکھ

اپنی ننگی چارپائی ڈھانپ لے
اس کے بستر کی دھلی چادر نہ دیکھ

فرش پر بے لفظ آوازوں کو سن
ہنہناتی گھوڑیوں کے سر نہ دیکھ

Read all Latest ghazal poetry in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from ghazal poetry and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Ghazals of chandrabhan khayal in Urdu | In Category: غزلیں و شاعری Ghazal poetry Urdu

Leave a Reply