کالا ہرن شکار کیس میں سلمان خان کو5 سال قید کی سزا،باقی چار ملزم بری

جودھپور: کالے ہرن شکار مقدمہ میں یہ قیاس آرائیاںکہ سلمان خان اور ان کے ساتھی بری ہوں گے یا سزا پائیں گے، اس وقت دم توڑ گئیں جب چیف جوڈیشیل مجسٹریٹ دیو کمار کھتری نے مقدمہ کے شریک ملزموں سیف علی خان، سونالی بندرے، نیلم اور تبو کو بری قرار دیتے ہوئے سلمان خان کو تحفظ جنگلاتی زندگی قانون مجریہ 1972کی دفعہ51کے تحت اصل مجرم قرار ددےکر انہیں5 سال قید اور10ہزار روپے جرمانے کی سزا سنادی۔
ان کی سزا کا تعین کرنے کی بحث کافی دیر تک چلتی رہی۔ اس قسم کے کیس میں کسی کا بھی جرم ثابت ہوجانے پر کم سے ایک سال کی اور زیادہ سے زیادہ 6سال قید کی سزا سنائی جا سکتی ہے۔
سلمان خان کے وکیل انہیں کم سے کم سزا سنانے کی وکالت کر رہے تھے۔ سلمان خان کے خلاف کالا ہرن، چنکارا شکار معاملات کے حوالے سے چار مقدمات چل رہے تھے۔
ان پر الزام تھا کہ انہوںنے ستمبر 1998میں بھواد گاؤں میں دو چنکارا مارے تھے،اکتوبر 1998کو راجستھان کے ہی گھودا کھیتوں میں ایک چنکارا مارا تھا اور اکتوبر1998میں ہی کنکانی گاؤں میں دو کالے ہرن کا شکار کیا تھا۔علاوہ ازیں ان پر ایسے دو آتشیں اسلحہ استعمال کرنے کا بھی الزام تھا جن کے لائسنس کی میعاد ختم ہو چکی تھی۔
لیکن آج کا فیصلہ صرف دو کالے ہرن کا شکار کرنے والے مقدمہ میں سنایا گیا ہے۔چونکہ سلمان خان کے علاوہ کسی شریک ملزم کے خلاف قرار واقعی ثبوت نہیں تھے اس لیے عدالت نے چاروں شریک ملزموں کو شک کا فائدہ دیتے ہوئے بری کر دیا۔مقدمہ کی سماعت28مارچ کو مکمل ہو گئی تھی اور فیصلہ5اپریل تک کے لیے محفوظ کر لیا گیاتھا۔
سماعت کے دوران سلمان اور دیگر نے صحت جرم سے انکار کرتے ہوئے خود کے بے قصور کہا تھا۔ اس مقدمہ میں دو گواہ تھے جنہوں نے حلفیہ بیان دیا تھا کہ یکم اکتوبر1998 کی رات دو بجے یہ شکار کھیلا گیا تھا۔یہ چاروں لوگ دو کالے ہرن دیکھ رک خوشی سے چیخ پڑےتھے اور انہوں نے چیخ کر سلمان سے کہا کہ دونوں کو شوٹ کردو ۔بچ کر نہ جانے پائیں۔
سلمان خان بدھ کی شام میں ہی اپنی بہنوں الویرا اور ارپیتا کے ہمراہ پہنچ گئی تھیں جبکہ سیف علی خان اور تبودوپہر میں ہی جودھپور آگئے تھے۔ ذہنی طور پر پریشان سیف علی ہوائی اڈے پر گاڑی کے شیشے چڑھا نے کے لیے ٹیکسی ڈرائیور سے الجھ پڑے ۔
ان پر الزام ہے کہ انہوں نے فلم ”ہم ساتھ ساتھ ہیں“ کی شوٹنگ کے دوران یکم اکتوبر 1998کی شب جودھپور کے قریب واقع ایک گاؤں کنکانی میں دو کالے ہرن مارے تھے۔ جس وقت انہوں نے یہ شکار کیا تو ان کے ہمراہ چھوٹے نواب سیف علی خان، سونالی بندرے ، نیلم اور تبو تھے۔19سال پرانے اس مقدمہ میں ان سب کے خلاف تحفظ جنگلاتی زندگی قانون کے تحت الزام طے کیے گئے تھے۔

Title: salman khan gets 5 years in jail in blackbuck poaching case | In Category: انٹرٹینمنٹ  ( entertainment )

Leave a Reply